کرن جوہر کا آئندہ کسی پاکستانی فن کار کو فلم میں کاسٹ نہ کرنے کا اعلان

ویب ڈیسک  منگل 18 اکتوبر 2016
فواد خان کو کاسٹ کرتے وقت پاک بھارت تعلقات بہتر تھے، کرن جوہر، فوٹو؛ فائل

فواد خان کو کاسٹ کرتے وقت پاک بھارت تعلقات بہتر تھے، کرن جوہر، فوٹو؛ فائل

ممبئی: بھارتی ہدایت کار کرن جوہر نے بھی انتہاپسند ہندؤوں کے آگے گھٹنے ٹیک دیئے اور آئندہ کسی بھی فلم میں پاکستانی اداکاروں کو نہ لینے کا اعلان کردیا۔

بھارتی میڈیا رپورٹس کے مطابق بالی ووڈ ہدایت کار وفلمساز کرن جوہر نے اپنے حالیہ ویڈیو بیان میں اپنی نئی فلم ’’اے دل ہے مشکل‘‘ سے متعلق اپنی خاموشی توڑتے ہوئے کہا ہے کہ بھارتی عوام کے جذبات کی قدر کرتا ہوں، جس وقت فواد خان کو فلم میں کاسٹ کیا اس وقت دونوں ملکوں کے حالات بہتر تھے لیکن اب آئندہ کسی فلم میں پاکستانی اداکاروں کو کاسٹ نہیں کروں گا۔

اس خبر کو بھی پڑھیں؛ ہندو انتہا پسندوں کی کرن جوہر  کو جان سے مارنے کی دھمکی

کرن جوہر نے ہندو انتہا پسندوں کے آگے گھٹنے ٹیکتے ہوئے ان سے درخواست کی وہ فلم ’’ اے دل ہے مشکل‘‘ کی راہ میں رکاوٹیں نہ ڈالیں کیوں کہ فلم کو مکمل کرنے میں بہت سے بھارتیوں کی محنت بھی شامل ہے۔ انہوں نے کہا ہے کہ کچھ لوگوں نے مجھے اینٹی نیشنل کہا جس پر دکھ ہوا جب کہ میرے لیے سب سے پہلے اپنا ملک ہے اور میرے نزدیک حب الوطنی ظاہر کرنے کا سب سے بہترین ذریعہ محبت پھیلانا ہے جو میں نے سینما کے ذریعے کرنے کی کوشش کی۔

اس خبر کو بھی پڑھیں؛ کرن جوہر نے فواد خان کو رنبیر سے بہترین اداکار قرار دے دیا

واضح رہے کہ پاک بھارت تعلقات میں کشیدگی کے باعث ہندو انتہا پسندوں نے نہ صرف پاکستانی فنکاروں کو ملک سے باہر نکلنے کے دھمکیاں دیں بلکہ پاکستانی اداکاروں کی فلموں کی نمائش روکنے کا بھی مطالبہ کیا ہے۔



ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔