کشمیر کے بارے میں اسٹیج ڈرامہ ’’شہ رگ کا لہو‘‘ اختتام پذیر

شوبز رپورٹر  جمعرات 1 دسمبر 2016
اس ڈرامے کا مقصد بھی یہی تھا کہ لوگوں تک کشمیر کی اصل حقیقت پہنچائی جائے، کنول۔ فوٹو: فائل

اس ڈرامے کا مقصد بھی یہی تھا کہ لوگوں تک کشمیر کی اصل حقیقت پہنچائی جائے، کنول۔ فوٹو: فائل

 لاہور:  کشمیر کے بارے میں ڈرامہ’’شہ رگ کا لہو‘‘ الحمرا میں اختتام پزیرہوگیا۔ اس موقع پرشائقین کی کثیر تعدادنے ڈرامہ دیکھا جب کہ پہلے روز وفاقی وزیر خواجہ سعدرفیق اورصبا صادق سمیت دیگراہم شخصیات نے خصوصی شرکت کی اورڈرامہ دیکھتے ہوئے فنکاروں کی عمدہ پرفارمنس کوسراہا۔

اس ڈرامے کو کنول نعمان کے ادارے ’’ ڈریمز انٹرنیشنل ‘‘ نے پروڈیوس کیا۔ ڈرامے کی کاسٹ میں گوشی خان، رائمہ، صنم ناز، مجاہد عباس، شاہد نزیر خان، ندیم ، توقیرزیدی، ملک زاہد، افروز خان اور چائلڈ اسٹار طیب اعظم شامل تھے جب کہ ڈرامے کے رائٹرسجادزیدی اور ڈائریکٹر گوشی خان ہیں جنہوں نے ڈرامے میں میجراگروال کا کردار نہایت خوبصورتی سے اداکیا ہے۔

اس ڈرامے میں بھارتی بربریت کے خلاف کشمیری مسلمانوں کی جدوجہددکھائی گئی ہے جب کہ اس کے ساتھ ساتھ بھارتی ہٹ دھرمی اور بھارتی سیاستدانوں کے کردارپر بھی روشنی ڈالی گئی ہے ۔

ڈرامے میں کشمیر بارے تاریخی حقائق کے ساتھ ساتھ موجودہ صورت حال بھی دکھائی گئی ہے۔ اس بارے میں ’’ ایکسپریس‘‘ سے گفتگو کرتے ہوئے کنول نعمان نے کہا کہ پاکستان نے ہمیشہ مظلوم کشمیریوں کی حمایت کی ہے اور آئندہ بھی یہ جاری رکھی جائے گی۔ اس ڈرامے کا مقصد بھی یہی تھا کہ لوگوں تک کشمیر کی اصل حقیقت پہنچائی جائے۔



ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔