تازہ ترین 
< >
rss

 عبداللطیف ابو شامل

جہاں گشت

بابا نے مجھےحکم دیا کہ میں اپنے جوتے بھی اس لوہار کے حوالے کردوں، سو میں نے حکم کی تعمیل کی

November 3, 2019

جہاں گشت

رات تاریکی میں صحرا کی رات ہُو کے عالم میں سامنے کھڑی ہوئی ڈراتی اور چاندنی ہو تو مُسکراتی ہے

October 27, 2019

جہاں گشت

یہ شیاطینِ ارض سر جوڑ کر بیٹھ جائیں، لاکھ منصوبے بنائیں، چالیں چلیں، مُہرے بدلیں، میرے رب کی چال کو نہیں پہنچ سکتے۔

October 20, 2019

جہاں گشت

مال و اسباب اتنا مت جمع کیجیے کہ زندگی ختم شُد کی ٹرین آجائے اور آپ اپنے سامان کے لیے ہلکان ہوتے رہیں

October 13, 2019

جہاں گشت

آنکھیں آبشار بنائے ہوئے ہنستے چلے جاتے اور اور مُسکراتے ہوئے برستے رہتے

October 7, 2019

جہاں گشت

ہر اک فقرہ پوری ایک ضخیم کتاب پر بھاری، بس سُنتے چلیے جائیے

September 30, 2019

جہاں گشت

سَجّن بیلیو! یہ زندگی تو ہنستی، گاتی، اتراتی اور مُسکراتی بہتی شفّاف ندی ہے جس کا پانی حیات ہے

September 22, 2019

جہاں گشت

میں نے سوچا ایسے کام نہیں چلے گا، کچھ تو کرنا ہی پڑے گا تو میں نے اپنے تئیں ذہانت کا مظاہرہ کرنے کی ٹھانی۔

September 15, 2019

جہاں گشت : میرے چاروں طرف وحشت زدہ جنگلی کتّے بھونک رہے تھے

جس تیزی سے میں اس کے پیچھے بھاگ رہا تھا وہ اس قدر مجھ سے دُور ہوتا جارہا تھا

September 1, 2019

جہاں گشت؛  ’’اب آپ سب مجھے مسکرا کر رخصت کردیں۔‘‘

اُس کے آنے سے موسم بدلتا، ناراض شجر مُسکرانے لگتے، ان پر نئے پتّوں اور پُھولوں سے بہار آجاتی

August 25, 2019
1