بالی ووڈ میں اچھے کام کی پیشکش ہوئی تو ضرور کروں گی، سعدیہ خان

قیصر افتخار  جمعرات 23 نومبر 2017
مختصرعرصہ میں حاصل ہونیوالے مقام کو برقرار رکھنے کے لیے معیاری کام ترجیح ہے ،اداکارہ ؛فوٹو: فائل

مختصرعرصہ میں حاصل ہونیوالے مقام کو برقرار رکھنے کے لیے معیاری کام ترجیح ہے ،اداکارہ ؛فوٹو: فائل

 لاہور:  معروف ماڈل واداکارہ سعدیہ خان نے کہا ہے کہ پاکستان کا نام روشن کرنا میرا اولین مقصد ہے، اچھے کام کی پیشکش ملک سے ہویا بھارت سے ضرور کروں گی۔

بالی ووڈ ہدایتکار کبیرخان کی طرف سے بالی ووڈ کے لیے مجھے موزوں قراردینا اعزاز سے کم نہیں ہے۔ فی الحال بالی ووڈ میں انٹری کا کوئی فیصلہ نہیں کیا، آنے والے دنوں میں اپنے چاہنے والوں کواچھی خبردوں گی۔ان خیالات کااظہار سعدیہ خان نے ’’ ایکسپریس‘‘ سے گفتگوکرتے ہوئے کیا۔ انھوں نے کہا کہ کبیرخان کسی تعارف کے محتاج نہیں ہیں۔ انھوں نے جس طرح سے اپنی فلموں کے ذریعے اپنی صلاحیتوں کااظہارکیا، اس کوسب نے دیکھا اورسراہا ہے۔ خاص طورپر ’’ بجرنگی بھائی جان ‘‘ کوجس طرح سے انھوں نے بنایا تھا وہ قابل تعریف ہے۔ ان کا میرے متعلق یہ کہنا کہ میں بے پناہ صلاحیتیوں کی مالک ہوں اورمیرے ٹیلنٹ سے بالی ووڈ کو فائدہ اٹھانا چاہیے اس پرمیں خود کوخوش قسمت سمجھتی ہوں۔ انھوں نے کہا کہ یہ بھی حقیقت ہے کہ میرے اور کبیرخان کے درمیان کبھی رابطہ نہیں ہوا البتہ بالی ووڈکی کئی دیگر شخصیات سے رابطہ رہتا ہے کیونکہ کئی بار مجھے بالی ووڈ میں کام کی پیشکش ہوچکی ہے۔

ایک سوال کے جواب میں سعدیہ خان نے کہا کہ ٹیلنٹ کو کسی بھی جگہ محدودنہیں کیا جا سکتا کیونکہ اب دنیا گلوبل ولیج کی حیثیت اختیارکرچکی ہے۔ اگر مجھے بالی ووڈ میں اچھے پروجیکٹ کی پیشکش ہوتی ہے تو ضرور کام کروں گی، اچھا پروجیکٹ اگرمجھے دنیا کے کسی اورملک سے بھی آفرہوا توضرور کام کروں گی۔ اس وقت توبس اتنا ہی کہہ سکتی ہوں کہ مختصرعرصہ میں جومقام ملا، اس کو برقرار رکھنے اور لمبی اننگز کھیلنے کے لیے معیار میری اولین ترجیح رہے گا۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔