شمالی کوریا سے براہ راست مذاکرات کے لیے تیار ہیں، امریکا

ویب ڈیسک  بدھ 13 دسمبر 2017
شمالی کوریا سے مذاکرات کےلئے تیارہیں،شمالی کوریاکوراستہ بدلنا ہوگا:فوٹو:فائل

شمالی کوریا سے مذاکرات کےلئے تیارہیں،شمالی کوریاکوراستہ بدلنا ہوگا:فوٹو:فائل

 واشنگٹن: امریکی وزیرخارجہ ریکس ٹلرسن نے کہا ہے کہ ہم شمالی کوریا کے ساتھ براہ راست مذاکرات کےلئے تیار ہیں لیکن اس کے لیے اسے جوہری ہتھیاروں کے راستے کو چھوڑنا ہوگا۔

غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق امریکی وزیرخارجہ ریکس ٹلرسن کا واشنگٹن کی اٹلانٹک کؤنسل تھنک ٹینک سے خطاب کرتے ہوئے کہنا تھا کہ شمالی کوریا کو ایٹمی پروگرام سے دستبردار کرنے کے لئے ہر ممکن اقدام کررہے ہیں، مسئلے پر طاقت کا استعمال ناکامی ہوگی تاہم امریکا شمالی کوریا کےخطرات کا جواب دینے کے لئے پوری طرح تیار ہے۔ انہوں نے کہا کہ ہم شمالی کوریا سے براہ راست مذاکرات کے لیے تیار ہیں لیکن اس کے لیے پیانگ یانگ کو جوہری ہتھیاروں کا راستہ چھوڑنا ہوگا۔

امریکی وزیرخارجہ کا مؤقف شمالی کوریا کی جانب سے بین البراعظمی بیلسٹک میزائل کے کامیاب تجربے کے تقریبا دو ہفتے بعد سامنے آیا ہے جس میں شمالی کوریا نے دعویٰ کیا ہے کہ اس کے میزائل امریکی سرزمین کو باآسانی نشانہ بنا سکتے ہیں۔

 



ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔