استحصالی نظام انتخاب کیخلاف11مئی کو پرامن دھرنے ہونگے، طاہر القادری

نمائندہ ایکسپریس  پير 25 مارچ 2013
ہمارا مقصد غریب عوام کو حقوق دلانا اور ملک ٹوٹنے سے بچانا ہے، ورکرز کنونشن سے خطاب۔ فوٹو: فائل

ہمارا مقصد غریب عوام کو حقوق دلانا اور ملک ٹوٹنے سے بچانا ہے، ورکرز کنونشن سے خطاب۔ فوٹو: فائل

لاہور: پاکستان عوامی تحریک کے قائد ڈاکٹر طاہرالقادری نے کہا ہے کہ لاکھوں کارکن اور ساری قوم 11مئی کو پرامن دھرنے دیکر اس استحصالی نظام انتخاب کو مسترد کر دیگی۔

تمام شہروں میں دھرنے ہونگے تاہم دھرنے کے شرکاء کسی کو ووٹ ڈالنے سے نہیں روکیں گے بلکہ صرف اس کرپٹ نظام انتخاب کیخلاف اپنا احتجاج ریکارڈ کرائینگے اور قوم کو یہ بتائیں گے کہ کرپٹ نظام سے لڑنا ہو گا، انتخابی اصلاحات کے بغیر ہونیوالے انتخابات قوم سے مذاق اور فراڈ ہونگے، 11مئی کے بعد مخلوط پارلیمنٹ وجود میں آئیگی اور پھر ساری قوم کہے گی کہ ہمارا فیصلہ درست تھا، یہ گندی سیاست اور کرپشن والا نظام ہماری منزل نہیں، ہمارا مقصد غریب عوام کو حقوق دلانا اور ملک کو ٹوٹنے سے بچانا ہے۔ وہ منہاج القرآن سیکریٹریٹ ماڈل ٹائون لاہور میں ملک گیر ورکرز کنونشن سے خطاب کر رہے تھے۔

1

ورکرکنونشن بذریعہ وڈیوکانفرنس بیرونی دنیا اور ملک کے 300شہروں میں لاکھوں لوگوں نے براہ راست دیکھا۔ ڈاکٹر طاہرالقادری نے کہا کہ اس نظام انتخاب میں ووٹ دینا کرپشن،دہشتگردی،ظلم اور بدعنوانی کی مدد کرنا ہے، پاکستان میں پہلے بھی لوگوں کی اکثریت ووٹ نہ ڈال کر اس کرپٹ نظام کو مسترد کرتی ہے، ہم عوام کے ایجنڈے اور حقوق کیلیے کام کر رہے ہیں اگر آج قوم نے اس نظام کو مسترد کر دیا تو یہی جدوجہد مستقبل میں حقیقی جمہوریت اور خوشحالی کا باعث ہو گی، انقلاب عوام اور پاکستان کا مقدر بن چکا اور وہ آ کر رہیگا،11مئی کو نام نہاد الیکشن کے تماشے کو سب دیکھ لیں گے کہ جمہوریت کے نام پر اس ملک کے عوام کیساتھ کتنا بڑا دھوکہ اور فراڈ ہو گا۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔