سابق جنوبی افریقی پیسرز محمدعرفان کے گن گانے لگے

اسپورٹس ڈیسک  جمعرات 28 مارچ 2013
طویل القامت پیسر کو ورلڈ کپ کھلانا ہے تو احتیاط سے استعمال کرنا ہوگا،ایلن ڈونلڈ  فوٹو: اے ایف پی/فائل

طویل القامت پیسر کو ورلڈ کپ کھلانا ہے تو احتیاط سے استعمال کرنا ہوگا،ایلن ڈونلڈ فوٹو: اے ایف پی/فائل

جوہانسبرگ: سابق جنوبی افریقی پیسرز محمدعرفان کے گن گانے لگے، پاکستانی بولر نے اپنی کارکردگی سے مکھایا این تینی اور ایلن ڈونلڈ کو خاصا متاثر کیا ہے۔

دونوں نے انھیں بولنگ میں بہتری کیلیے مفید مشوروں سے بھی نوازا،این تینی نے عرفان کو کامیابی کیلیے رن اپ بہتر بنانے کاکہا، ان کا کہنا ہے کہ خود کو فٹ رکھنے کیلیے انھیں ٹوئنٹی 20 کھیلنے سے پرہیز کرنا ہوگا، پروٹیز بولنگ کوچ کا کہنا ہے کہ اگر طویل القامت پیسر کو ورلڈ کپ 2015 کھلانا ہے تو پھر احتیاط سے استعمال کرنا ہوگا۔

تفصیلات کے مطابق محمد عرفان نے دورئہ جنوبی افریقہ کا آغاز ایسٹ لندن کے بے جان ٹریک پر بولنگ سے کیا مگر وہاں پر اپنی پرفارمنس سے سابق پروٹیز فاسٹ بولر مکھایا این تینی کو کافی متاثر کیا، ان کے سیریز کے پہلے ٹیسٹ میں ڈیبیو کا امکان تھا مگر وانڈررز میں کھلانے کے بجائے کیپ ٹائون میں کھلایا گیا جہاں کی وکٹ فلیٹ تھی، بعد میں مصباح الحق نے انکشاف کیاکہ عرفان ٹور میچ میں کندھے کی تکلیف سے دوچار ہوگئے تھے اس لیے پہلے ٹیسٹ میں نہیں کھلایا گیا۔

مکھایا این تینی اور ایلن ڈونلڈ اس بات پر متفق نظر آئے کہ عرفان ایک انتہائی باصلاحیت فاسٹ بولر ہیں مگر ساتھ ہی انھیں رن اپ اور فٹنس بہتر بنانے کا مشورہ بھی دیدیا۔ این تینی نے کہا کہ عرفان ایک بہترین بولر ہیں مگر انھیں فٹ اور مضبوط ہونے کی ضرورت ہے، وہ اپنے قد سے زیادہ فائدہ اٹھا سکتے ہیں، وہ اپنا کام جانتے اور وسیم اکرم جیسا بولر بننے کی صلاحیت رکھتے ہیں، انھوں نے مزید کہا کہ عرفان کا رن اپ زیادہ بہتر نہیں ہے۔

وہ سست رفتاری سے آکرگیند کرتے ہیں جس کی وجہ سے اس رفتار سے بال بیٹسمین تک نہیں جاتی جیسی جانی چاہیے، انھیں کسی ایسے شخص کی ضرورت ہے جو زیادہ تیز رن اپ کیلیے حوصلہ افزائی کرسکے، ایک بار وہ تیز دوڑنا شروع کردیں توبولنگ مزید مہلک ہوجائیگی۔ واضح رہے کہ جنوبی افریقہ کے دورے میں عرفان نے تمام فارمیٹس کے 7 میچز میں 22 وکٹیں لیں، انھوں نے 140 میل فی گھنٹہ کی رفتار تک بولنگ کی۔

این تینی نے مزید کہا کہ عرفان فٹنس پر توجہ دے کر اپنے کیریئر کو طول دے سکتے ہیں مگر اس کیلیے انھیں ٹوئنٹی20 سے پرہیز کرتے ہوئے ون ڈے اور ٹیسٹ کرکٹ پر توجہ دینا ہوگی۔ ایلن ڈونلڈ کا کہنا ہے کہ اگر مجھے عرفان کو ورلڈ کپ 2015 میں آزمانا ہوتا تو انھیں ہر ٹیسٹ میں نہ کھلاتا اور انھیں استعمال کرنے میں احتیاط سے کام لیتا۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔