کرمنل ریکارڈ آفس میں40ہزار ملزمان کا کمپیوٹرائزڈ ڈیٹا مرتب

اسٹاف رپورٹر  جمعـء 29 مارچ 2013
 فوٹو: فائل

فوٹو: فائل

کراچی:  کرمنل ریکارڈ آفس میں 40 ہزار ملزمان کا کمپیوٹرائزڈ ڈیٹا مرتب کر لیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق سندھ پولیس کے انفارمیشن ٹیکنالوجی کے تحت کرمنل ریکارڈ آفس میں40ہزار ملزمان کا کمپیوٹرائزڈ ڈیٹا مرتب کر لیا گیا ہے، آئی ٹی ذرائع نے بتایا کہ کرمنل ریکارڈ آفس میں3لاکھ ملزمان کا ریکارڈ موجود ہے جو روایتی طریقے سے مرتب کیا گیا ہے۔

انھوں نے بتایا کہ سندھ پولیس کے انفارمیشن ٹیکنالوجی کے تحت ملزمان کا کمپیوٹرائزڈ ڈیٹامرتب کیا جا رہا ہے،تمام کرمنلز کا ریکارڈ مرتب کیے جانے کے بعد تمام تھانوں جات ، انویسٹی گیشن شعبوں اور پولیس کے اسپیشلائزڈ یونٹ سے منسلک کردیا جائے گا تاکہ اگر کسی واردات کے دوران کوئی ملزم پکڑا جاتا ہے تو فوری طور پر ملزم کا تمام سابقہ رکارڈ معلوم کیا جاسکتا ہے۔

آئی ٹی ذرائع نے بتایا کہ کمپیوٹرائزڈ ایف آئی آر کے اندراج کیلیے 190پولیس اہلکاروں کو تربیت فراہم کی جا چکی ہے جس کے بعد تربیت حاصل کرنے والے اہلکاروں نے کمپیوٹرائزڈ آیف آئی آر کے اندراج کا عمل بھی شروع کردیا ہے اور روزانہ کی بنیاد پر کمپیوٹرائزڈ آیف آئی آر کے اندراج کا عمل جاری ہے۔

انھوںنے بتایا کہ کمپیوٹرائزڈ ایف آئی آر کے اندراج کے لیے ٹریننگ کے دوران غیر حاضر رہنے والے 65 پولیس اہلکاروں کی دوبارہ ٹریننگ شروع کردی گئی ہے اور جلد ان پولیس اہلکاروں کی تربیت مکمل ہو جائے گی جس کے بعد یہ پولیس اہلکار بھی کمپیوٹرائزڈ ایف آئی آر کا اندراج کر سکیں گے۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔