معروف قانون دان عاصمہ جہانگیر کو سپرد خاک کردیا گیا

ویب ڈیسک  منگل 13 فروری 2018
عاصمہ جہانگیر کو آخری رسومات کیلئے لے جایا جارہا ہے، فوٹوسوشل میڈیا

عاصمہ جہانگیر کو آخری رسومات کیلئے لے جایا جارہا ہے، فوٹوسوشل میڈیا

لاہور: معروف قانون دان عاصمہ جہانگیر کو آہوں اور سسکیوں کے ساتھ سپرد خاک کردیا گیا ہے۔

معروف قانون دان اور سماجی کارکن عاصمہ جہانگیر کی نماز جنازہ قذافی اسٹیڈیم میں ادا کی گئی، نماز جنازہ فاروق حیدر مودودی نے پڑھائی۔ عاصمہ جہانگیر کو بیدیاں روڈ پرواقع ان کے فارم ہاؤس میں سپرد خاک کردیا گیا۔

اس خبرکوبھی پڑھیں: معروف قانون دان عاصمہ جہانگیر انتقال کرگئیں

نماز جنازہ میں معروف سیاسی و سماجی رہنماؤں، وکلا برادری سمیت شہریوں اورخواتین  کی بڑی تعداد نے شرکت کی جب کہ اس موقع پرسیکیورٹی کے بھی انتہائی سخت انتظامات کیے گئے تھے۔

عاصمہ جہانگیر 27 جنوری 1952 کو لاہور میں پیدا ہوئیں، انسانی حقوق کی علمبردار کے طور پر جانی جانے والی عاصمہ جہانگیر کو ناصرف پاکستان بلکہ دنیا بھر میں خاص شہرت حاصل تھی اور انہیں ان کی خدمات کے اعتراف میں کئی اعزازات سے بھی نوازا گیا تھا۔

واضح رہے کہ وزیر اعلیٰ سندھ مراد علی شاہ نے عاصمہ جہانگیر کی تدفین سرکاری اعزاز کے ساتھ کرنے کے لیے وزیر اعظم کو خط لکھا تھا اور ان کی تدفین کے دوران قومی پرچم سرنگوں کرنے کی بھی درخواست کی تھی۔



ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔