قصور میں بچوں سے بدفعلی اور ویڈیو بنانے والے 3 مجرموں کو عمر قید

ویب ڈیسک  منگل 13 فروری 2018
انسداد دہشت گردی عدالت نے حسیم عامر ، وسیم سندھی اور علیم آصف پر تین تین لاکھ روپے جرمانے بھی کردیا فوٹو:فائل

انسداد دہشت گردی عدالت نے حسیم عامر ، وسیم سندھی اور علیم آصف پر تین تین لاکھ روپے جرمانے بھی کردیا فوٹو:فائل

 لاہور: قصور میں بچوں سے بدفعلی اور ان کی نازیبا ویڈیو بنانے کے اسکینڈل میں ملوث 3 ملزمان کو عمر قید کی سزا سنا دی گئی۔

لاہور میں انسداد دہشت گردی کی عدالت نمبر 4 میں قصور ویڈیو اسکینڈل کیس کی سماعت ہوئی۔ عدالت نے جرم ثابت ہونے پر 3 مجرموں حسیم عامر ، وسیم سندھی اور علیم آصف کو عمر قید اور فی کس تین تین لاکھ روپے جرمانے کی سزا کا حکم جاری کردیا۔ تینوں مجرموں کو تھانہ گنڈا سنگھ میں درج مقدمہ نمبر 219/15 میں سزا سنائی گئی۔

یہ بھی پڑھیں: قصور زیادتی اسکینڈل میں اہم پیشرفت، مرکزی ملزم نے اعتراف جرم کرلیا

قصور ویڈیو اسکینڈل میں ملوث 22 ملزمان کے خلاف 14 مقدمات درج ہیں۔ اس سے قبل ایک اور مقدمے میں بھی جرم ثابت ہونے پر حسیم عامر اور فیضان مجید کو پچیس پچیس سال قید کی سزا ہوچکی ہے۔

واضح رہے کہ اگست 2015 میں قصور میں درجنوں بچوں سے زیادتی اور ان کی نازیبا ویڈیوز بنا کر انٹرنیٹ پر پھیلانے کا کیس سامنے آیا تھا۔



ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔