بھارت خود دہشت گردی کروا کر الزام پاکستان پر تھوپ دیتا ہے، دفترخارجہ

ویب ڈیسک  جمعرات 15 فروری 2018
کسی بھی واقعے کا الزام پاکستان پر لگانا بھارت کا پرانا وطیرہ ہے، ترجمان دفترخارجہ :  فوٹو : فائل

کسی بھی واقعے کا الزام پاکستان پر لگانا بھارت کا پرانا وطیرہ ہے، ترجمان دفترخارجہ : فوٹو : فائل

 اسلام آباد: ترجمان دفترِ خارجہ ڈاکٹرمحمد فیصل کا کہنا ہے کہ کسی بھی واقعے کے بعد پاکستان پر الزام لگانا بھارت کا پرانا وطیرہ ہے، ماضی میں بھی بھارت خود اپنے ملک میں تخریب کاری کی کارروائیاں کرکے پاکستان کو موردِ الزام ٹھہراتا رہا ہے۔

اسلام آباد میں ہفتہ وار بریفنگ دیتے ہوئے ترجمان دفتر خارجہ ڈاکٹرفیصل کا کہنا تھا کہ مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فوجی کیمپ سنجوان پر حملے کے بھارتی پولیس اور دفاعی حکام کے الزامات مسترد کرتے ہیں، تحقیقات کے بغیر الزام لگانا افسوسناک اور غیرذمہ دارانہ ہے، اس طرح کے الزامات تناؤ میں بڑھاوے کا مؤجب بنتے ہیں، پاکستان ہر قسم کی جارحیت کا بھرپور جواب دینے کی صلاحیت رکھتا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ کسی بھی واقعے کے بعد پاکستان پر الزامات لگا دینا بھارت کا پرانا وطیرہ ہے، ماضی میں بھی بھارت خود اپنے ملک میں دہشت گردی کے واقعات کروا کرپاکستان کو موردِ الزام ٹھہراتا رہا ہے۔

اس خبرکوبھی پڑھیں:  بھارت کی گیدڑ بھبکی

ترجمان دفترخارجہ نے کہا کہ وزیرِخارجہ خواجہ آصف تیونسی ہم منصب کی دعوت پر تیونس کا دورہ کررہے ہیں جس کا مقصد باہمی تعلقات کا فروغ اور مختلف شعبوں میں تعاون بڑھانا ہے۔ روس میں طیارہ حادثے کے حوالے سے ترجمان کا کہنا تھا کہ طیارہ حادثے پر دلی افسوس ہے، پاکستانی حکومت اور عوام روسی عوام کے دکھ میں برابر کے شریک ہیں۔



ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔