شہباز شریف نے پارٹی معاملات ہاتھ میں لے لیے، بڑی تبدیلیوں کا امکان

یوسف عباسی  پير 16 اپريل 2018
چودھری نثار سے شہباز شریف کی ملاقات بھی اسی سلسلے کی ایک کڑی ہے۔فوٹو: فائل

چودھری نثار سے شہباز شریف کی ملاقات بھی اسی سلسلے کی ایک کڑی ہے۔فوٹو: فائل

لاہور: مسلم لیگ ن میں اہم اور بڑی تبدیلیوں کے امکانات روشن ہونے لگے، پارٹی ڈسپلن کو برقراررکھتے ہوئے ورکرز، عام انتخابات کے امیدواران اورموجودہ اراکین اسمبلی کے لیے پارٹی پالیسی مرتب کی جارہی ہے جس کا شہباز شریف جلد باقاعدہ اعلان کریں گے۔

ذرائع کے مطابق مسلم لیگ ن کے صدر شہباز شریف برق رفتاری سے پارٹی کے معاملات کو سنبھال رہے ہیں اس ضمن میں ملکی سطح پر پارٹی کو متحد کرنے میں سرگرم بھی ہیں، گزشتہ روز چودھری نثار سے شہباز شریف کی ملاقات بھی اسی سلسلے کی ایک کڑی ہے تاہم پارٹی کے اندر جذباتی اور خودساختہ ایکشن پلان بنانے والے عہدیداران و اراکین اسمبلی کو ازخود فیصلے کرنے سے روک دیا گیا ہے حتیٰ کہ پارٹی کے حق میں کیے جانے والے مظاہروں کی بھی قبل از وقت پارٹی سربراہ سے منظوری لی جائے گی۔

یہ عمل غیر ضروری ایسے محرکات کو قابو کرنے کے لیے کیاگیا ہے جس کا فائدہ اپوزیشن جماعتیں اٹھارہی ہیں اور جس کے باعث پارٹی کو بیٹھے بٹھائے سیاسی مخالفین کی باتیں سننا پڑ رہی ہیں۔

 



ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔