بغیر اجازت تصاویر اسکین کرنے پر فیس بک کیخلاف ہرجانہ دائر ہوسکتا ہے، امریکی عدالت

ویب ڈیسک  منگل 17 اپريل 2018
عدالتی فیصلے کے حوالے سے اپنا بھرپور دفاع کریں گے، فیس بک ۔ فوٹو : فائل

عدالتی فیصلے کے حوالے سے اپنا بھرپور دفاع کریں گے، فیس بک ۔ فوٹو : فائل

سان فرانسسكو: امریکی عدالت نے سماجی رابطے کی سائٹ فیس بک کے خلاف تصاویر بغیر علم میں لائے اسکین کرنے پر صارفین کو ہرجانہ دائر کرنے کا اختیار دے دیا ہے۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق امریکی ریاست کیلی فورنیا کے شہر سان فرانسسکو کی عدالت نے سماجی رابطے کی مشہور سائٹ فیس بک کے خلاف فیصلہ سناتے ہوئے کہا کہ فیس بک کے وہ تمام صارفین جن کی تصاویر  ان کے علم میں لائے بغیراسکین کی گئیں وہ کمپنی کے خلاف ہرجانے کا دعویٰ دائر کرسکتے ہیں۔

عدالت کے فیصلے کے بعد فیس بک کا کہنا ہے کہ وہ اس حوالے سے اپنا بھرپور دفاع کرے گی، اس کیس کے فیصلے سے فیس بک کے امریکا میں بائیو میٹرک کے استعمال پر دور رس نتائج مرتب ہوسکتے ہیں۔

واضح رہے کہ فیس بک پر تصاویر میں اپنے دوستوں کو ٹیگ کرنا اس ویب سائٹ کا مقبول ترین فنکشن رہا ہے اور ٹیکنالوجی کے بہتر ہونے کے ساتھ ساتھ فیس بک نے چہرے کی شناخت کے ذریعے اس کام کو اور بھی آسان بنا دیا تھا۔



ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔