صدر کی تضحیک بند نہ کی گئی تو ہمارے پاس بھی بہت مواد ہے، راجا پرویز اشرف

ویب ڈیسک  پير 22 اپريل 2013
ملک کا آئین صرف الزامات کی بنیاد پر کسی بھی شخص کو انتخابات میں حصہ لینے سے نہیں روکتا، راجا پرویز اشرف۔  فوٹو: اے ایف پی/ فائل

ملک کا آئین صرف الزامات کی بنیاد پر کسی بھی شخص کو انتخابات میں حصہ لینے سے نہیں روکتا، راجا پرویز اشرف۔ فوٹو: اے ایف پی/ فائل

اسلام آباد: سابق وزیر اعظم راجا پرویز اشرف نے کہا کہ مخالفین پیپلزپارٹی پر ضرور تنقید کریں مگر کسی کو صدر کو ہدف بنانے کا حق نہیں اگر صدر کی تضحیک بند نہ کی گئی تو ہمارے پاس بھی بہت مواد ہے۔

اسلام آباد میں نیوز کانفرنس کے دوران سابق وزیر اعظم نے کہا کہ ان سمیت کئی رہنماؤں پر کرپشن کے الزامات ہیں اور اسی بنیاد پر ان کی جماعت کے لوگوں کے کاغذات مسترد کیے گئے ،اس پر انہیں الیکشن کمیشن سے گلہ ہے کیونکہ ملک کا آئین صرف الزامات کی بنیاد پر کسی بھی شخص کو انتخابات میں حصہ لینے سے نہیں روکتا۔

راجا پرویز اشرف نے کہا کہ کچھ سیاسی لیڈر صدر آصف زرداری کو تنقید کا نشانہ بنا رہے ہیں صدر کو ہدف بنانا پارلیمنٹ کو ہدف بنانے کے برابر ہے، صدر نے لاہور ہائی کورٹ کے حکم کی مکمل تعظیم کی اورعدالتی حکم ہی کی وجہ سے صدرآصف زرداری انتخابی مہم میں شامل نہیں ہیں، صدر کی تضحیک بند نہ کی گئی تو ہمارے پاس بھی بہت مواد ہے۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔