چیف جسٹس کا میڈیا مالکان کو آج دوپہر تک تنخواہیں ادا کرنے کا حکم

ویب ڈیسک  بدھ 13 جون 2018
میڈیا مالکان آج اپریل اور مئی کی تنخواہیں ادا کر دیں ورنہ سخت کارروائی کروں گا، چیف جسٹس۔  فوٹو: فائل

میڈیا مالکان آج اپریل اور مئی کی تنخواہیں ادا کر دیں ورنہ سخت کارروائی کروں گا، چیف جسٹس۔ فوٹو: فائل

 لاہور: صحافیوں کی تنخواہوں کی عدم ادائیگیوں سے متعلق کیس میں چیف جسٹس نے میڈیا مالکان کو جمعرات دوپہر 2 بجے تک اپریل اور مئی کی تنخواہیں ادا کرنے کا حکم دیا ہے۔

 سپریم کورٹ لاہور رجسٹری میں چیف جسٹس کی سربراہی میں صحافیوں کی تنخواہوں کی عدم ادائیگیوں سے متعلق کیس کی سماعت ہوئی، اس موقع پر تنخواہیں ادا نہ کرنے پر لاہور پوسٹ کے چیف ایڈیٹر اور منیجر کو گرفتار کرکے عدالت میں پیش کردیا گیا۔

سماعت کے دوران چیف جسٹس نے ریمارکس میں کہا کہ میڈیا مالکان جمعرات دوپہر 2 بجے تک اپریل اور مئی کی تنخواہیں ادا کر دیں ورنہ سخت کارروائی کروں گا، جو صحافی کام کرتے ہیں تنخواہیں ان کا بنیادی حق ہے لہذا آج 2 بجے تک اپریل اور مئی کی تنخواہیں صحافیوں کو مل جانی چاہئیں۔

اس خبر کو بھی پڑھیں : ملازمین کو تنخواہیں ادا نہ کرنے والے میڈیا مالکان سپریم کورٹ طلب

گزشتہ سماعت پر عدالت نے تنخواہیں نہ دینے والے میڈیا مالکان کو کل طلب کرتے ہوئے میڈیا اداروں سے نکالے گئے صحافیوں کی برطرفیاں بھی معطل کردی تھیں۔ چیف جسٹس پاکستان نے عدالتی حکم کے باوجود تنخواہیں نہ دینے پر برہمی کا اظہار کرتے ہوئے کہا تھا کہ میڈیا مالکان ذاتی حیثیت میں پیش ہو کر وضاحت کریں، سپریم کورٹ نے بول ٹی وی، جیو نیوز، سیون نیوز، وقت، اب تک ٹی وی، اے آر وائی، رائل ٹی وی، جنگ، نوائے وقت اور نئی بات سمیت تنخواہیں ادا نہ کرنے والے دیگر میڈیا مالکان کو پیش ہونے کا حکم دیا تھا۔



ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔