جلال آباد میں چیک پوسٹ کے قریب خودکش حملہ،10 افراد ہلاک

ویب ڈیسک  منگل 10 جولائ 2018
ایک خودکش حملہ آور نے سیکیورٹی چیک پوائنٹ کے قریب خود کو دھماکے سے اڑالیا (فوٹو: رائٹرز)

ایک خودکش حملہ آور نے سیکیورٹی چیک پوائنٹ کے قریب خود کو دھماکے سے اڑالیا (فوٹو: رائٹرز)

جلال آباد: افغانستان کے مشرقی صوبے ننگر ہار کے صدر مقام جلال آباد میں سیکیورٹی چیک پوسٹ کے قریب خودکش حملے میں کم ازکم 10 افراد ہلاک ہوگئے۔

صوبائی گورنر کے ترجمان نے میڈیا کو بتایا کہ جلال آباد میں سیکیورٹی چیک پوائنٹ کے قریب ایک خودکش حملہ آور نے خود کو اڑا لیا، انہوں نے بتایا کہ واقعے میں ہلاک ہونے والوں میں 2 سیکیورٹی اہلکاربھی شامل ہیں جب کہ 2 افراد زخمی ہیں۔

یہ بھی پڑھیں: افغانستان کے شہر جلال آباد میں این جی او کے دفتر پر حملہ، 3 افراد ہلاک

حکام کا کہنا ہے کہ دھماکا اتنا شدید تھا کہ قریب کھڑی گاڑیاں تباہ ہوگئیں جب کہ آس پاس کی دکانیں بھی آگ کی لپیٹ میں آنے سے جل گئیں اور ان میں موجود سامان خاکستر ہوگیا۔

دھماکے کی ذمہ داری شدت پسند تنظیم داعش نے قبول کرلی ہے۔ اس سے قبل بھی داعش جلال آباد میں سرکاری و غیر سرکاری تنصیبات پر حملوں کی ذمہ داری قبول کرچکی ہے۔



ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔