ایشین ریسلنگ؛ قومی پلیئرز کو ویزوں کیلیے بھارت کا گرین سگنل

اسپورٹس ڈیسک  جمعرات 12 جولائ 2018
مہمان کھلاڑیوں کو ہوٹل اور اسٹیڈیم کے سواکہیں جانے کی اجازت نہیں ہوگی۔ فوٹو؛ سوشل میڈیا

مہمان کھلاڑیوں کو ہوٹل اور اسٹیڈیم کے سواکہیں جانے کی اجازت نہیں ہوگی۔ فوٹو؛ سوشل میڈیا

 لاہور: ایشین جونیئر ریسلنگ چیمپئن شپ میں شرکت کیلیے بھارتی وزارت داخلہ نے پاکستانی ٹیم کو بھارت آنے کی اجازت دیدی۔

ایشین جونیئر ریسلنگ چیمپئن شپ  کے ڈی جادیو اسٹیڈیم نیو دہلی میں17 سے 22 جولائی تک شیڈول ہے۔ پاکستان، عراق اور افغانستان کے ریسلرز کو ویزہ جاری نہ کرنے پر یونائیٹد ورلڈ ریسلنگ کی جانب سے ایونٹ منسوخ یا بھارتی رکنیت معطل کیے جانے کا خدشہ تھا جس پر انڈین ریسلنگ فیڈریشن نے وزارت داخلہ کے حکام سے پاکستانی ریسلرز کو ویزے جاری کرنے کی درخواست کی جسے قبول کرلیا گیا۔

انڈین فیڈریشن کے اسسٹنٹ سیکریٹری ونود تومار نے کہا کہ وزارت داخلہ نے پاکستانی ٹیم کو بھارت میں مقابلوں کیلیے آنے کی مشروط اجازت دیدی ہے۔

انڈین فیڈریشن کی جانب سے کرائم برانچ کو اس بات کی یقین دہانی کرائی گئی ہے کہ پاکستانی ریسلرز ہوٹل اور اسٹیڈیم کے علاوہ کہیں نہیں جائیں گے، پاکستانی ریسلرز کو این او سی جاری ہونا خوش آئند ہے، ایشین کیڈٹ چیمپئن شپ2015 میں ویزے مسائل کی وجہ سے ایونٹ بدمزگی کا شکار ہوا تھا، ہم کھیل کے فروغ کیلیے ایونٹس کے بہترین ماحول میں انعقاد پر یقین رکھتے ہیں،  غیرملکی ریسلرز کی شرکت سے میزبان پلیئرز کو بھی سیکھنے اور کھیل میں بہتری لانے کا موقع ملتا ہے، مقابلوں کی رونقیں جتنی زیادہ ہوں گی، اتنا ہی زیادہ ہمارے ریسلرز سیکھ سکیں گے۔ انھوں نے کہا کہ افغانستان اور عراق کی جانب سے ایونٹ میں شرکت کیلیے کسی ریسلر کی انٹری نہیں کروائی گئی۔



ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔