ایس ای سی پی کا رجسٹرڈ کمپنیوں پر ڈیمز فنڈ میں حصہ ڈالنے پر زور

بزنس رپورٹر  ہفتہ 14 جولائ 2018
کمپنیاں اس قومی معاملے میں سوشل کارپوریٹ ریسپانسیبلٹی کے تحت بڑھ چڑھ کر حصہ لیں، ایس ای سی پی۔ فوٹو: فائل

کمپنیاں اس قومی معاملے میں سوشل کارپوریٹ ریسپانسیبلٹی کے تحت بڑھ چڑھ کر حصہ لیں، ایس ای سی پی۔ فوٹو: فائل

کراچی: سیکیورٹیز اینڈ ایکس چینج کمیشن آف پاکستان نے تمام رجسٹرڈ کمپنیوں کو کارپوریٹ سوشل ریسپانسیبلٹی کے تحت دیامیر بھاشا اور مہمندڈیم فنڈ میں عطیات دینے کی حوصلہ افزائی کی ہے۔

ایس ای سی پی کی جانب سے جاری کردہ سرکلر میں ڈیموں کی تعمیر کے لیے سپریم کورٹ کی جانب سے فنڈ قائم کرنے کے اقدام کو سراہا گیا ہے اور کمپنیوں پر زور دیا گیا ہے کہ وہ اس قومی معاملے میں سوشل کارپوریٹ ریسپانسیبلٹی کے تحت بڑھ چڑھ کر حصہ لیں۔

ایس ای سی پی کا کہنا ہے کہ کمپنیوں کی جانب سے ڈیم کی تعمیر میں شمولیت ملک کو درپیش پانی کے بحران کے حل میں معاون ہوگی۔ ان ڈیموں کی تعمیرنہ صرف آنے والے سالوں میں پانی کی ضرورت پوری کرے گی بلکہ اس طرح ملک میں کاروباری سرگرمیوں میں بھی اضافہ ہو گا جو کارپوریٹ سیکٹر کی ترقی و فروغ کا باعث ہوں گی۔

فنانس ڈویژن پہلے ہی ڈیموں کی تعمیر کے لیے عطیات جمع کروانے کے لیے دیامیر بھاشا اور مہمند ڈیم فنڈ قائم کر چکا ہے جس کا اکاؤنٹ نمبر .03-593-299999-001-4 اور IBN No.PK06SBPP0035932999990014 ہے۔ ڈیموں کی تعمیر کے لیے اس اکاؤنٹ میں فنڈز و عطیات جمع کروائے جا سکتے ہیں۔

 



ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔