ویت نام میں سیلاب اور بارشوں سے 19 افراد ہلاک

ویب ڈیسک  اتوار 22 جولائ 2018
سیلابی ریلے اور لینڈ سلائیڈنگ سے 15 ہزار مکانات تباہ ہوگئے۔ فوٹو : فائل

سیلابی ریلے اور لینڈ سلائیڈنگ سے 15 ہزار مکانات تباہ ہوگئے۔ فوٹو : فائل

ہنوئی: ویت نام میں ہونے والی مسلسل موسلا دھار بارش نے سیلاب کی صورت اختیار کرلی ہے جس کے نتیجے میں 19 افراد ہلاک ہوگئے ہیں جب کہ 13 تاحال لاپتہ ہیں۔

بین الاقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق جنوب مشرقی ایشیائی ملک ویتنام میں سمندری طوفان سون تنھ کے باعث موسلادھار بارشوں اور سیلاب سے ہلاکتوں کی تعداد 19 ہوگئی ہے۔ ایک لاکھ ہیکٹر پر کھڑی فصلیں تباہ ہو گئی ہیں اور درجنوں گاؤں بہہ گئے ہیں۔ تاحال 13 افراد لاپتہ ہیں جن کی تلاش کا کام جاری ہے۔

ندی نالوں میں طغیانی آجانے کے باعث سیلاب کا پانی دیہات، قصبوں اور شہروں میں داخل ہو گیا ہے جہاں سے مقامی آبادی کو محفوظ مقام پر منتقل کردیا گیا ہے تاہم اب بھی سیکڑوں افراد متاثرہ علاوں میں پھنسے ہوئے ہیں جن کو ریسکیو کیا جا رہا ہے۔ دارالحکومت اور تمام بڑے شہروں کے اسپتالوں میں ایمرجنسی نافذ کردی گئی ہے۔ حکام ہلاکتوں میں اضافے کا خدشہ ظاہر کر رہے ہیں۔

واضح رہے کہ ویت نام کو سمندری طوفان اور سیلاب کا سامنا ہر سال ہی رہتا ہے تاہم اس بار سیلابی ریلے نے اپنے آغاز سے ہی بڑے پیمانے پر نقصان پہنچایا ہے۔ زیادہ تر ہلاکتیں لینڈ سلائیڈنگ کی وجہ سے ہوئی ہیں۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔