متحدہ مجلس عمل کی انتخابی نتائج کے خلاف آل پارٹیز کانفرنس آج ہو گی

ویب ڈیسک  جمعرات 26 جولائ 2018
آل پارٹیز کانفرنس میں مسلم لیگ (ن)، پی پی، ایم کیو ایم اور اے این پی کو مدعو کیا گیا ہے۔ فوٹو : فائل

آل پارٹیز کانفرنس میں مسلم لیگ (ن)، پی پی، ایم کیو ایم اور اے این پی کو مدعو کیا گیا ہے۔ فوٹو : فائل

 اسلام آباد: متحدہ مجلس عمل کے سربراہ مولانا فضل الرحمان نے انتخابی نتائج کومسترد کرتے ہوئے کُل جماعتی کانفرنس بلانے کا اعلان کردیا ہے۔

ایکسپریس نیوز کے مطابق انتخابی نتائج کے خلاف متحدہ مجلس عمل کے سربراہ مولانا فضل الرحمان نے تمام ہم خیال جماعتوں کو ایک پلیٹ فارم پر جمع کرنے کا فیصلہ کیا ہے جس کے لیے ایم ایم اے آج 27 جولائی کو آل پارٹیز کانفرنس کا انعقاد کرنے جارہی ہے جس میں پیپلز پارٹی، مسلم لیگ (ن)، ایم کیو ایم، پی ایس پی اور اے این پی سمیت تمام ہم خیال جماعتوں کو مدعو کیا گیا ہے۔

ترجمان ایم ایم اے کا کہنا ہے کہ متحدہ مجلس عمل دھاندلی سے بھر پور انتخابی نتائج کو مسترد کرتی ہے جس پر مشترکہ لائحہ عمل طے کرنے کے لیے کُل جماعتی کانفرنس بلائی گئی ہے جس میں ایک پلیٹ فارم سے مشترکہ جدوجہد کے ممکنات پر غور کیا جائے گا۔ اے پی سی کے تمام انتظامات مکمل کرلیئے گئے ہیں۔

واضح رہے کہ عام انتخابات 2018 کے اب تک موصول ہونے والے غیر سرکاری اور غیر حتمی نتائج کے تحت تحریک انصاف کو برتری حاصل ہے تاہم ایم ایم اے سمیت مسلم لیگ (ن)، ایم کیو ایم، اے این پی اور دیگر سیاسی جماعتوں نے انتخابی عمل کی شفافیت پر سوال اُٹھاتے ہوئے نتائج کو مسترد کردیا ہے۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔