لڑکی سے زیادتی وقتل کی کوشش کرنے والے 3 ملزمان کا ریمانڈ

اسٹاف رپورٹر  اتوار 12 اگست 2018
طبی رپورٹ میں زیادتی،تشدد و گلا دبانے سے گلے پرنشانات کی تصدیق ہوگئی۔ فوٹو: فائل

طبی رپورٹ میں زیادتی،تشدد و گلا دبانے سے گلے پرنشانات کی تصدیق ہوگئی۔ فوٹو: فائل

کراچی: جوڈیشل مجسٹریٹ غربی نے گلشن معمارکے فارم ہائوس میں لڑکی سے زیادتی اور قتل کرنے کی کوشش کرنے کے الزام میں گرفتار3ملزمان کو17اگست تک جسمانی ریمانڈ پر پولیس کی تحویل میں دے دیا۔

گزشتہ روز تھانہ گلشن معمار کے پولیس افسر نے زیادتی اور اقدام قتل کے الزام میں گرفتار مرکزی ملزم شاہ رخ ، احسن اور معاذ کا جسمانی ریمانڈ حاصل کرنے کے لیے فاضل عدالت میں پیش کیا، اس موقع پر پولیس نے عدالت کو بتایا کہ لڑکی لانڈھی کی رہائشی ہے اور وہ اپنے دوست سے ملنے گلشن معمار آئی تھی۔

مرکزی ملزم شاہ رخ نے متاثرہ لڑکی کو فارم ہائوس کی سیر کرانے کا جھانسہ دے کر اپنے ساتھیوں کے ہمراہ فارم ہاؤس کے چوکیدار کو رقم دے کر رہائش حاصل کی اور لڑکی کو نشہ آور مشروب پلااکر بے ہوشی کے عالم میں زیادتی کی اور شناخت مٹانے کے لیے گلادبا کرقتل کرنے کی کوشش کی، لڑکی کے بے ہوش ہونے پر ملزمان اسے مردہ سمجھ کر جھاڑیوں میں پھینک کرفرار ہوگئے تھے۔

پولیس نے لڑکی کو اسپتال پہنچایا جہاں اس کی جان بچ گئی ،لڑکی کے بیان پر ملزمان کو گرفتار کیا گیا اور میڈیکل رپورٹمیں نشہ آور مشروب ، زیادتی،تشدد اورگلا دبانے کے باعث گلے پر نشانات پائے گئے ہیں،پولیس نے ملزمان سے تحقیقات کیلیے 14روز کے جسمانی ریمانڈ کی استدعا کی ،عدالت نے چھ روز کے جسمانی ریمانڈ پر پولیس کی تحویل میں دیدیا۔

 



ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔