ٹیلی کام شعبے کی ٹیکس ادائیگی 5 سال میں 684 ارب روپے رہی

خبر ایجنسی  اتوار 19 اگست 2018
ٹیلی کام شعبے میں کی جانے والی براہ راست غیرملکی سرمایہ کاری کا حجم 2.3 ارب ڈالر رہا ہے۔ فوٹو: فائل

ٹیلی کام شعبے میں کی جانے والی براہ راست غیرملکی سرمایہ کاری کا حجم 2.3 ارب ڈالر رہا ہے۔ فوٹو: فائل

 اسلام آباد:  5 سال کے دوران ٹیلی کام کے شعبے نے قومی خزانے کو 684 ارب روپے کے ٹیکسز ادا کیے ہیں جبکہ مالی سال 2013 تا 2017 کے دوران ٹیلی کام کے شعبے میں خدمات فراہم کرنے والی کمپنیوں کی جانب سے 4.2 ارب ڈالر کی سرمایہ کاری کی گئی ہے۔

پاکستان ٹیلی کمیونیکیشن اتھارٹی (پی ٹی اے) کی رپورٹ کے مطابق مالی سال 2017 کے دوران موبائل فون سروسز فراہم کرنے والی چار کمپنیوں کی جانب سے مختلف ٹیکسز اور ڈیوٹیز کی مد میں قومی خزانے کو 68.37 ارب روپے کی ادائیگیاں کی گئی ہیں جبکہ ان کمپنیوں کی آمدن 436 ارب روپے رہی ہے۔

پی ٹی اے کے مطابق ملک میں براڈبینڈ صارفین کی تعداد 58.33 ملین تک بڑھ گئی ہے جبکہ ملک میں موبائل فونز صارفین مجموعی قومی آبادی کے 74.1 فیصد تک پہنچ گئے ہیں۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔