بابر اعظم کے پاس کوہلی سے نمبر ون پوزیشن چھیننے کا موقع

اسپورٹس ڈیسک  جمعـء 14 ستمبر 2018
حسن وکٹوں کے انبار لگا کر دوبارہ بولنگ میں ٹاپ درجے پرفائز ہونے کے قریب۔ فوٹو: فائل

حسن وکٹوں کے انبار لگا کر دوبارہ بولنگ میں ٹاپ درجے پرفائز ہونے کے قریب۔ فوٹو: فائل

دبئی: ایشیا کپ میں شریک ٹیموں اور پلیئرز کو رینکنگ میں بہتری کا سنہری موقع میسر آگیا۔

ایشیا کپ ہفتے سے یو اے ای میں شروع ہورہا ہے جس میں اچھی پرفارمنس کی بدولت ٹیمیں اور پلیئرز دونوں ہی اپنی رینکنگ پوزیشنز میں بہتری پا سکتے ہیں۔

ایونٹ میں شریک ٹیموں میں ٹاپ رینک بھارت اس وقت121 پوائنٹس کے ساتھ انگلینڈ سے نیچے دوسرے نمبر پرموجود ہے،پاکستان 104 پوائنٹس لے کر پانچویں پوزیشن سنبھالے ہوئے ہے، اگر گرین شرٹس ایشیائی ہمسایوں کو مات دے کر ٹائٹل جیتے تو پھر ان کی رینکنگ پوزیشن بھی بہتر ہوجائے گی ۔

بیٹسمین رینکنگ میں اس وقت نمبر ون پوزیشن ویرات کوہلی کے پاس ہے تاہم انھیں ایشیا کپ میں بھارت نے آرام دے دیا، جس سے دوسرے نمبر پر موجود بابر اعظم کے پاس اچھی کارکردگی کی بدولت ٹاپ پر ترقی پانے کا موقع موجود ہوگا۔ اوپنر فخر زمان بھی دھواں دار بیٹنگ کے جوہر دکھا کر اپنی 16 ویں پوزیشن کو بہتر بنا سکتے ہیں۔

اسی طرح بولرز میں حسن علی فی الحال تیسرے نمبر پر ہیں، ان سے آگے افغانستان کے راشد خان اور ٹاپ پر بھارتی جسپریت بمرا موجود ہیں، انھیں ترقی پانے کیلیے اسی ایونٹ میں شریک ان بولرز سے بھرپور مقابلہ کرنا ہوگا۔ آل راؤنڈرز میں بھی دوسرے نمبر پر اگرچہ محمد حفیظ موجود ہیں تاہم وہ ایشیا کپ کیلیے گرین شرٹس کا حصہ نہیں بن سکے۔

پاکستانی کپتان سرفراز احمد کا کہنا ہے کہ ہمارے لیے رینکنگ میں بہتری کیلیے یہ ایونٹ کافی اہم ہے، ویسے بھی ورلڈ کپ میں شریک آدھی ٹیمیں ایشیا کپ میں شامل ہیں جس کی وجہ سے ہمیں اس ایونٹ میں اپنی تیاریوں کو جانچنے کا موقع ملے گا۔ انھوں نے کہا کہ اگرچہ چیمپئنز ٹرافی کی خوشگوار یادیں موجود ہیں مگر اب ہماری توجہ اگلے چیلنجز پر مرکوز ہے۔

ادھر بابر اعظم نے کہاکہ میں جانتا ہوں کہ ویرات کوہلی رینکنگ میں مجھ سے آگے ہیں مگر میں اپنی پوزیشن بہتر بنانے کی کوشش کروں گا۔ حسن علی نے کہاکہ میں پہلے بولنگ میں ٹاپ پوزیشن سنبھال چکا اور دوبارہ اس مقام تک پہنچنے کی پوری کوشش ہوگی۔



ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔