پاکستان بھارتی پنجاب میں دہشت گردی کی کارروائیوں میں ملوث ہے، بھارت کی ہرزہ سرائی

اے ایف پی  بدھ 5 جون 2013
پنجاب میں بھاری تعداد میں اسلحہ اور دھماکا خیز مواد بھی پاکستانی سرحد سے منتقل کیا جاتا ہے، بھارتی وزیر داخلہ کی ہرزہ سرائی فوٹو: فائل

پنجاب میں بھاری تعداد میں اسلحہ اور دھماکا خیز مواد بھی پاکستانی سرحد سے منتقل کیا جاتا ہے، بھارتی وزیر داخلہ کی ہرزہ سرائی فوٹو: فائل

نئی دہلی: بھارتی وزیر داخلہ سشیل کمار شندے نے الزام عائد کیا ہے کہ پاکستان کی خفیہ ایجنسیاں بھارتی پنجاب میں دہشت گردی کی کارروائیوں میں مدد دے رہی ہیں۔

بھارتی دارالحکومت نئی دہلی میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے وزیر داخلہ سشیل کمار شندے نے کہا کہ پاکستانی کی خفیاں ایجنسیاں  پنجاب میں علیحدگی پسند تنطیموں کے رہنماؤں کو دہشت گردی کی کارروائیوں کے لئے اکساتی اور انہیں تربیت بھی فراہم کرتی ہیں۔ انہوں  نے کہا کہ بھارتی پنجاب میں گزشتہ کچھ دنوں میں علیحدگی پسند سکھوں کی جانب سے کئے جانے والے حملوں میں تیزی آئی ہے اور سکھ نوجوانوں کو پاکستان میں دہشت گردی کی تربیت دی جا رہی ہے۔

وزیر داخلہ سشیل کمار شندے نے پاکستان کے خلاف مزید ہرزہ سرائی کرتے ہوئے کہا کہ پنجاب میں بھاری تعداد میں اسلحہ اور دھماکا خیز مواد بھی پاکستانی سرحد سے منتقل کیا جاتا ہے اور امریکا اور یورپ سے بھی سکھوں کو پاکستان میں دہشت گردی کی تربیت لینے کے لئے بھیجا جاتا ہے۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔