محکمہ خوراک سندھ کا 10 لاکھ میٹرک ٹن گندم فلور ملز کو دینے کا فیصلہ

وکیل راؤ  ہفتہ 13 اکتوبر 2018
فی الوقت 17 لاکھ میٹرک ٹن گندم موجود ہے جو صوبے کی کھپت سے کافی زیادہ ہے۔ فوٹو: فائل

فی الوقت 17 لاکھ میٹرک ٹن گندم موجود ہے جو صوبے کی کھپت سے کافی زیادہ ہے۔ فوٹو: فائل

 کراچی:  محکمہ خوراک سندھ نے صوبے میں آٹے کی بڑھتی ہوئی قیمتوں کو قابو کرنے کیلیے 10 لاکھ میٹرک ٹن گندم فلور ملز کو فراہم کرنے کا فیصلہ کیا ہے جبکہ وفاق سے 5 لاکھ میٹرک ٹن گندم کی برآمد کی اجازت بھی طلب کر لی ہے۔

گندم کی برآمد کی اجازت نہ ملنے کی صورت میں سندھ حکومت آئندہ سیزن میں گندم کی بڑے پیمانے پر خریداری نہیں کرسکے گی۔ محکمے کے پاس فی الوقت 17 لاکھ میٹرک ٹن گندم کا ذخیرہ موجود ہے جو صوبے کی کھپت سے کئی گنا زیادہ ہے۔

اس حوالے سے محکمہ خوراک سندھ کے سیکریٹری ڈاکٹر نواز شیخ نے روزنامہ ایکسپریس بتایا کہ قحط سالی کے شکار ریگستانی علاقوں میں مفت گندم کی فراہمی کے باوجود صوبے کے پاس گندم کے وافر ذخائر موجود ہیں۔ صوبے میں آٹے کی قیمتوں میں اضافے کا کوئی جواز نہیں۔



ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔