سعودی عرب نے جمال خشوگی کو لاپتا کرنے سے متعلق الزامات کو بے بنیاد قرار دیدیا

ویب ڈیسک  ہفتہ 13 اکتوبر 2018
سعودی عرب کے خلاف منفی پروپیگنڈا کرکے بدنام کیا جارہا ہے، وزیر داخلہ (فوٹو: فائل)

سعودی عرب کے خلاف منفی پروپیگنڈا کرکے بدنام کیا جارہا ہے، وزیر داخلہ (فوٹو: فائل)

ریاض: سعودی عرب نے صحافی جمال خشوگی کی گمشدگی میں سعودی حکومت کے ملوث ہونے کے الزامات کو بے بنیاد اور قابل مذمت قرار دے دیا۔

عرب میڈیا کے مطابق سعودی وزیر داخلہ شہزادہ عبدالعزیز بن سعود نے استنبول میں موجود سعودی قونصل خانے کے ذریعے صحافی جمال خشوگی کو لاپتا کرنے میں سعودی عرب کے ملوث ہونے کی سختی سے تردید کی ہے۔

یہ بھی پڑھیں: ترکی نے لاپتا صحافی کے سعودی قونصل خانے میں قتل ہونے کے شواہد حاصل کرلیے

سعودی وزیر داخلہ نے کہا ہے کہ میڈیا کے بعض حلقوں کی جانب سے صحافی کے لاپتا ہونے پر سعودی حکومت کے خلاف پروپیگنڈا کیا جارہا ہے جس کی ہم شدید مذمت کرتے ہیں۔

وزیر داخلہ نے مزید کہا کہ سعودی عرب عالمی معاہدوں، بین الااقوامی قوانین اور اصولوں پر کاربند رہتے ہوئے اپنے شہریوں کی حفاظت کا خواہاں ہے اور ترک حکام کی جانب سےمشترکہ تفتیشی کمیٹی کےقیام کی منظوری کو سراہتے ہیں۔



ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔