امریکا کو بتادیا افغانستان سے متعلق توقعات پوری نہیں کرسکتے، ترجمان دفتر خارجہ

ویب ڈیسک  جمعـء 9 نومبر 2018
ہمارا بنیادی مسئلہ بھارت کے ساتھ ہے جس سے ہم نے 4 جنگیں لڑی ہیں، ترجمان دفتر خارجہ فوٹو: فائل

ہمارا بنیادی مسئلہ بھارت کے ساتھ ہے جس سے ہم نے 4 جنگیں لڑی ہیں، ترجمان دفتر خارجہ فوٹو: فائل

 اسلام آباد: ترجمان دفتر خارجہ ڈاکٹر محمد فیصل کا کہنا ہے کہ افغانستان کے معاملے میں پاکستان سے امریکی توقعات بہت زیادہ ہیں لیکن ہم نے انہیں بتادیا ہے کہ جو ہم کرسکے کریں گے لیکن اس قدر نتائج نہیں دے سکتے۔

اسلام آباد میں سینیٹ پالیسی ریسرچ فورم سے خطاب کے دوران ترجمان دفتر خارجہ نے کہا کہ ہمارا بنیادی مسئلہ بھارت کے ساتھ ہے جس سے ہم نے 4 جنگیں لڑی ہیں، وزیر اعظم نے بھارت سے مذاکرات کے لیے خط لکھ کربات کرنے کو کہا، 19 تاریخ کو ہمارا خط گیا، 20 کو بھارت مذاکرات کے لیے مان گیا اور 21 کو وہ اپنی بات سے پھر گیا، اس کی وجہ بھارت میں آئندہ پارلیمانی انتخابات ہیں، کیوں کہ بھارتی انتخابات میں پاکستان اہم ترین ایشو ہوتا ہے، سیاسی جماعتوں کے پاکستان کے حوالے سے موقف کو دیکھا جاتا ہے۔

ڈاکٹر محمد فیصل نے کہا کہ ہم دنیا سے متوازن تعلقات چاہتے ہیں، وزیراعظم کا دورہ بہت مثبت رہا، دو ماہ میں ایران کے وزیر خارجہ دو مرتبہ پاکستان آئے جو بہت مثبت ہے۔ امریکا سے ہمارے تعلقات اچھے نہیں ہیں، افغانستان پر امریکا کی توقعات ہم سے زیادہ ہیں، ہم نے انہیں بتادیا ہے کہ جو ہم کرسکے کریں گے لیکن اس قدر نتائج نہیں دے سکتے۔

مشرق وسطیٰ بالخصوص سعودی عرب سے پاکستان کے تعلقات سے متعلق ترجمان دفتر خارجہ نے کہا کہ سعودی عرب میں 30 لاکھ پاکستانی کام کرتے ہیں اور ہم ان میں اضافہ چاہیں گے، ہم مقامات مقدسہ کا تحفظ کریں گے اس کے علاوہ غیر جانبدار رہیں گے۔



ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔