رکشا ڈرائیور کے قتل میں ملوث خاتون گرفتار

اسٹاف رپورٹر  ہفتہ 8 دسمبر 2018
ملزمہ اور مقتول پہلے دوست رہ چکے تھے اور اب وہ اس سے پیچھا چھڑانا چاہ رہی تھی، پولیس۔ فوٹو : فائل

ملزمہ اور مقتول پہلے دوست رہ چکے تھے اور اب وہ اس سے پیچھا چھڑانا چاہ رہی تھی، پولیس۔ فوٹو : فائل

 کراچی: ابراہیم حیدری سے 30 نومبر کو ملنے والی رکشا ڈرائیور کی لاش ملنے کے واقعے کا معمہ حل ہوگیا اور قتل میں ملوث ملزمہ کو گرفتار کرلیا گیا۔

سکھن تھانے کی حدود ابراہیم حیدری سے 30 نومبر کو نور محمد کی لاش ملی تھی جو رکشا ڈرائیور تھا، پولیس حکا کا کہنا ہے کہ قتل میں ملوث ملزمہ شاہینہ کو گرفتار کرلیا گیا ہے، قتل میں ملوث اس کا ساتھی مفرور ہے جسے جلد گرفتار کرلیا جائے گا۔

پولیس کے مطابق ملزمہ نے اپنے دوست کے ساتھ مل کر نور محمد کو قتل کیا،ملزمہ اور مقتول پہلے دوست رہ چکے تھے اور اب وہ اس سے پیچھا چھڑانا چاہ رہی تھی، پولیس واقعے کی مزید تحقیقات کررہی ہے۔



ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔