عوامی شکایات پر تعلقہ کونسل تلہار میں کروڑوں کی کرپشن کی تحقیقات شروع

نامہ نگار  جمعـء 5 جولائ 2013
تلہار کے شہریوں کی شکایت پر محکمہ بلدیات حکومت سندھ نے تعلقہ کونسل تلہار میں گزشتہ 3 برس سے ہونیوالی کروڑوں روپے کی کرپشن کی تحقیقات شروع کر دی ہے۔فوٹو: فائل

تلہار کے شہریوں کی شکایت پر محکمہ بلدیات حکومت سندھ نے تعلقہ کونسل تلہار میں گزشتہ 3 برس سے ہونیوالی کروڑوں روپے کی کرپشن کی تحقیقات شروع کر دی ہے۔فوٹو: فائل

تلہار:  عوامی شکایات پر تعلقہ میونسپل کمیٹی تلہار میں کرپشن کی تحقیقات شروع کر دی گئی۔

لاکھوں روپے کے جنریٹر ،پمپنگ مشینیں، کمپیوٹر ، لیپ ٹاپ اور تعلقہ کونسل کا دیگر سامان غائب ہونے کا انکشاف، تعلقہ کونسل کے ایک افسر اور ملازم کے گھر سے 2 جنریٹر اور ایک فریج برآمد۔ تفصیلات کے مطابق تلہار کے شہریوں کی شکایت پر محکمہ بلدیات حکومت سندھ نے تعلقہ کونسل تلہار میں گزشتہ 3 برس سے ہونیوالی کروڑوں روپے کی کرپشن کی تحقیقات شروع کر دی ہے۔ سیاسی رہنما نواز علی جتوئی نے بتایا کہ تعلقے کیلیے لاکھوں روپے کے جنریٹر، پمپنگ مشینیں ، ایئرکنڈیشن، کمپیوٹر اور دیگر سامان خریدا گیا تھا لیکن یہ سامان علاقے کے سیاسی رہنماؤں اور بااثر لوگوں کو دے دیا گیا ہے۔

جبکہ تعلقہ کونسل کے ملازمین بھی یہ سامان گھروں کو لے گئے۔گزشتہ روز ایک ٹیم نے سابق تعلقہ آفیسر فنانس کے گھر پر چھاپہ مار کر ایک لاکھ 50ہزار روپے مالیت کے 2 جنریٹر برآمد کیے، جبکہ تعلقہ کونسل کے ایک چھوٹے ملازم کے گھر سے فریج بھی برآمد کیا گیا ہے۔ عوامی شکایت کے بعد نیب، اینٹی کرپشن اور دیگر ایجنسیاں تعلقہ کونسل تلہار میں ہونیوالی کروڑوں روپے کی کرپشن کی تحقیقات کررہی ہیں۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔