سماعت سے محروم افراد بھی ڈرائیونگ لائسنس حاصل کر سکیں گے

اسٹاف رپورٹر  بدھ 9 جنوری 2019
لائسنس برانچ ، ٹریفک پولیس سے رائے لے کر قانون میں ضروری ترمیم کریں، چیف سیکریٹری کو ہدایت

لائسنس برانچ ، ٹریفک پولیس سے رائے لے کر قانون میں ضروری ترمیم کریں، چیف سیکریٹری کو ہدایت

 کراچی:  وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ نے کہا ہے کہ مختلف ممالک قوت سماعت سے محروم افراد کو ڈرائیونگ لائسنس جاری کررہے ہیں تو پھر ہم جاری کیوں نہیں کررہے۔

مراد علی شاہ نے چیف سیکریٹری سندھ ممتاز شاہ کوہدایت کی کہ وہ ڈرائیونگ لائسنس برانچ  اور ٹریفک پولیس سے اس حوالے سے رائے لیں اور اس کے بعد قانون میں ضروری ترمیم کریں تاکہ قوت سماعت سے محروم افراد کو ڈرائیونگ لائسنس جاری کیے جاسکیں۔ وزیراعلیٰ سندھ نے چیف سیکریٹری کو لکھے گئے ایک خط میں کہا کہ پاکستان میں قوت سماعت سے محروم افراد کی اچھی خاصی تعداد ہے جو کہ فعال زندگی گزاررہے ہیں اور پاکستان کی ترقی میں اہم کردار ادا کررہے ہیں۔

مراد علی شاہ نے کہا کہ آئین کے آرٹیکل 25 کے تحت تمام شہری قانون کے سامنے برابر ہیں اور انھیں قانون کے تحت مساوی تحفظ حاصل ہے، اس میں کسی بھی بنیادپر کوئی تفریق نہیں ہے جبکہ آرٹیکل 18 کے تحت تجارت و کاروبار یا پروفیشن کے حوالے سے آزادی کی ضمانت ہے۔ مراد علی شاہ نے کہا ہے کہ قوت سماعت سے محروم افراد کو ڈرائیونگ لائسنس جاری کرنے سے بے شمار سماجی و معاشی فوائد حاصل ہوں گے۔ انھوں نے کہا کہ سب سے پہلے تو آئین میں فراہم کی گئی ضمانت پر عملدرآمد ہوگا، دوسرا یہ کہ قوت سماعت سے محروم افراد کو نقل و حمل میں آسانی ہوگی اور یہ آزادانہ طور پر اپنی گاڑیوں پر بغیر کسی پر بوجھ بنے سفر کرسکیں گے۔



ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔