جناح اسپتال ؛ کینسر کے علاج کیلیے دوسرے سائبر نائف روبوٹ کی تنصیب جاری

ریجا فاطمہ  جمعرات 10 جنوری 2019
شعبہ سائبر نائف میں مریضوں کا علاج مفت ہوتا ہے،مردوں کوپروسٹیٹ اورخواتین کوچھاتی کاکینسرزیادہ ہورہاہے،ڈاکٹر طارق محمود

شعبہ سائبر نائف میں مریضوں کا علاج مفت ہوتا ہے،مردوں کوپروسٹیٹ اورخواتین کوچھاتی کاکینسرزیادہ ہورہاہے،ڈاکٹر طارق محمود

 کراچی: جناح اسپتال میں کینسر کے علاج کی غرض سے ایک اور سائبر نائف روبوٹ نصب کیا جارہا ہے اس پر 57 کروڑ روپے (41 لاکھ امریکی ڈالر) کی لاگت آئے گی۔

روبوٹ کی تنصیب کا عمل 3 ماہ میں مکمل کرلیا جائے گا جس کے بعد سائبر نائف روبوٹ کی تعداد 2 ہوجائے گی، اس طرح روزانہ 24 مریضوں کی ریڈیو سرجری کی جاسکے گی یہ بات جناح اسپتال کے ریڈیالوجی ڈپارٹمنٹ کے سربراہ پروفیسر ڈاکٹر طارق محمود نے گفتگو میں بتائی، انھوں نے کہا کہ ملک میں کینسر کے مریضوں کی تعداد بڑھ رہی ہے اور زیادہ تر مریض جناح اسپتال کا رخ کررہے ہیں، مریضوں کے اسی دبائو کو مدنظر رکھتے ہوئے ریڈیالوجی کے شعبہ سائبر نائف میں مزید ایک اور روبوٹ نصب کیا جارہا ہے اس وقت ایک روبوٹ کام کررہا ہے لیکن وہ مریضوں کے بڑھتے ہوئے رش کے باعث ناکافی ثابت ہورہا ہے، نجی شعبے کے تعاون سے منگوائے جانے والے روبوٹ پر 57 کروڑ روپے (41 لاکھ امریکی ڈالر) لاگت آئے گی ۔

روبوٹ کی مرمت پر 10 سے 11 کروڑ روپے خرچ کیے جاتے ہیں جوکہ حکومت ادا کرتی ہے، 2 روبوٹس کی تنصیب کے بعد شعبے میں روز 24 مریضوں کی ریڈیو سرجری ممکن ہوسکے گی ، ریڈیو تھراپی کمیشن کو بھی اپ گریڈ کیا جارہا ہے۔



ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔