تنخواہوں اورپنشن میں اضافے کے باضابطہ 3 نوٹیفکیشن جاری

ارشاد انصاری  بدھ 17 جولائ 2013
اطلاق یکم جولائی سے ہوگا،ملازمین کی پنشن5ہزار،فیملی پنشن3750روپے ماہانہ کردی

اطلاق یکم جولائی سے ہوگا،ملازمین کی پنشن5ہزار،فیملی پنشن3750روپے ماہانہ کردی

اسلام آ باد:  وفاقی حکومت نے سرکاری ملازمین کی بنیادی تنخواہوں اورپنشن میں 10 فیصداضافہ کردیا ہے ۔

جبکہ ریٹائرڈسرکاری ملازمین کی کم ازکم پنشن 3ہزارروپے ماہانہ سے بڑھاکر5 ہزارروپے اورفیملی پنشن 2250 روپے سے بڑھاکر 3750روپے ماہانہ کردی گئی ہے، وزارت خزانہ کی طرف سے باضابطہ طورپر 3 نوٹیفکیشن جاری کردیے گئے۔ پہلے نوٹیفکیشن کے تحت یکم جولائی2013 سے سرکاری ملازمین کی تنخواہوںمیں ایڈہاک ریلیف کی مد میں 10فیصد اضافہ کردیا گیا۔ نوٹیفکیشن میں بتایا گیاکہ مذکورہ 10فیصد الاؤنس پرانکم ٹیکس کااطلاق ہوگا اوریہ الائونس غیرمعمولی چھٹی پرفراہم نہیں کیاجائے گا۔ علاوہ ازیں مذکورہ الاؤنس گریجویٹی، پنشن اورہائوس رینٹ کے تعین کے لیے شامل نہیں کیاجائے گا۔ دوسرے نوٹیفکیشن کے مطابق تمام ریٹائرڈسرکاری ملازمین کی پنشن میں بھی 10 فیصداضافہ کردیا گیاہے۔

اس کااطلاق بھی یکم جولائی سے ہوگا۔ نوٹیفکیشن میں مزیدکہا گیاکہ یکم جولائی 2013 اوراس کے بعدریٹائر ہونے والے سرکاری ملازمین پرمذکورہ اضافے کے علاوہ 2010سے لے کر 2012-13تک ریٹائرڈملازمین کی پنشن میںہونے والے 50فیصد اضافے کابھی اطلاق ہوگا۔ نوٹیفکیشن میں مزیدکہا گیاکہ 10 فیصد اضافہ نیٹ پنشن میں کیا گیاہے اوراس میں میڈیکل الاؤنس شامل نہیں ہوگا۔ نوٹیفکیشن میں مزیدکہا گیاکہ ایسے ریٹائرڈملازمین جو 15اگست 1947کو یااس کے بعدریٹائر ہوئے ہیں اور وہ بیرون ملک مقیم ہیں انھیں بھی پنشن میں 10 فیصد اضافہ دیاجائے گا۔

البتہ بھارت اوربنگلادیش میںرہنے والے ان پاکستان کے ریٹائرڈسرکاری ملازمین کویہ اضافہ فراہم نہیں کیا جائے گا۔ جبکہ تیسرے نوٹیفکیشن کے مطابق ریٹائرڈملازمین کی کم ازکم پنشن بھی یکم جولائی سے 3 ہزارروپے سے بڑھاکر 5ہزار روپے ماہانہ کردی گئی ہے۔ اسی طرح وفات پاجانے والے ملازمین کے بیوی بچوںکو ملنے والی فیملی پنشن 2250روپے ماہانہ سے بڑھاکر 3750روپے ماہانہ کردی گئی ہے۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔