رونالڈو کو ٹیکس دھوکہ دہی کے جرم میں 2 سال کے لیے معطلی کی سزا

اسپورٹس ڈیسک  منگل 22 جنوری 2019
پرتگالی اسٹار پر الزام تھا کہ انہوں نے تقریباً 14.7 ملین یوروز کا ٹیکس دھوکہ دیا ہے فوٹو: فائل

پرتگالی اسٹار پر الزام تھا کہ انہوں نے تقریباً 14.7 ملین یوروز کا ٹیکس دھوکہ دیا ہے فوٹو: فائل

میڈریڈ: اسپین کی عدالت نے عالمی شہرت یافتہ فٹ بالر کرسٹیانو رونالڈو کو ٹیکس میں دھوکہ دہی کا مجرم قراردے کر دوسالہ معطلی کی سزا سنادی ہے۔

اسپین کے شہر میڈریڈ کی عدالت میں کرسٹیانو رونالڈو کے خلاف ٹیکس میں دھوکہ دہی سے متعلق معاملے کی سماعت ہوئی، پرتگالی اسٹار پر الزام تھا کہ انہوں نے تقریباً 14.7 ملین یوروز کا ٹیکس دھوکہ دیا ہے۔ انہوں نے ٹیکس بچانے کے لیے ورجن آئی لینڈ اور آئرلینڈ جیسے مقامات پر موجود کمپنیوں کا استعمال کیا کیونکہ ان ملکوں میں قوانین کے تحت کم ٹیکس ادا کر کے چھوٹ حاصل کی جا سکتی ہے، اس کے علاوہ انہوں نے اپنی تصاویر کے حقوق سے حاصل ہونے والی آمدنی بھی ٹیکس حکام سے چھپائی۔

عدالت نے کرسٹیانو رونالڈو کو 2 سال کے لیے معطلی کی سزا سنادی ہے، اس کے علاوہ انہیں 19 ملین یوروز کا جرمانہ بھی ادا کرنا ہوگا۔ اس موقع پر رونالڈو بھی کمرہ عدالت میں موجود تھے اور انہوں نے جرمانے سے متعلق معاہدے پر بھی دستخط کردیئے ہیں۔

واضح رہے کہ اسپین کی تاریخ میں پہلی مرتبہ عدالت نے کسی کھلاڑی کو دو سال کے لئے معطلی کی سزا دی ہے۔



ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔