مسجد میں فائرنگ کرکے 6 نمازیوں کو قتل کرنے والے کینیڈی شہری کو عمر قید

ویب ڈیسک  ہفتہ 9 فروری 2019
ملزم پر مسجد میں 6 افراد کو قتل اور 6 پر قاتلانہ حملہ کرنے کا الزام تھا۔ فوٹو : فائل

ملزم پر مسجد میں 6 افراد کو قتل اور 6 پر قاتلانہ حملہ کرنے کا الزام تھا۔ فوٹو : فائل

کیوبک سٹی: کینیڈا میں مسجد پر فائرنگ کرکے 6 نمازیوں کو قتل کرنے والے ملزم الیگزینڈر بسونیٹ کوعمر قید کی سزا سنادی گئی۔

بین الاقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق کینیڈا کی عدالت نے 29 سالہ نوجوان الیگزینڈر بسونیٹ کو 6 افراد کے قتل اور اقدام قتل کے دیگر مقدمات میں عمر قید سزا سنادی، ملزم کو 40 سال بعد پیرول پر رہا کیا جا سکے گا۔

ملزم نے جنوری 2017 میں کینیڈا کے شہر کیوبک کی ایک مسجد میں مسلح حملہ آور نے حملہ کرکے 6 نمازیوں کو قتل اور 6 کو زخمی کردیا تھا۔ وزیراعظم جسٹن ٹروڈو نے واردات کو دہشت گردی قرار دیتے ہوئے ملزم کو قرار واقعی سزا دلوانے کا وعدہ کیا تھا۔

پراسیکیوٹر نے دہشت گردانہ کارروائی پر ملزم کو 6 بار سزائے موت یا 150 سال قید کی سزا کی استدعا کی تھی تاہم عدالت نے ملزم کی کارروائی کو مذہبی منافرت کے بجائے پناہ گزینوں کے خلاف نفرت اور ملزم کی ذہنی حالت کو مد نظر رکھتے ہوئے عمر قید کی سزا سنائی۔

کینیڈا میں 2012 سے مسلمانوں کے خلاف نفرت آمیز رویے میں اضافہ ہوا اور 2017 میں مذہبی تعصب کی بنیاد پر تشدد کا نشانہ بنانے کے سب سے زیادہ واقعات رپورٹ ہوئے تھے۔



ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔