سیالکوٹ پولیس کا کارنامہ، شہری کے خلاف ایک ہی جرم میں 5 مقدمات درج کرلیے

ویب ڈیسک  پير 18 فروری 2019
ایک ہی الزام میں 5 ایف آئی اے درج کرنا خلاف قانون ہے، درخواست گزار فوٹو: فائل

ایک ہی الزام میں 5 ایف آئی اے درج کرنا خلاف قانون ہے، درخواست گزار فوٹو: فائل

 لاہور: سیالکوٹ پولیس نے شہری کے خلاف ایک ہی جرم میں 5 مقدمات درج کرلیے جس پر ملزم ہائی کورٹ جا پہنچا۔

لاہور ہائی کورٹ کے جسٹس فاروق حیدر نے سیالکوٹ کے شہری درخان کی درخواست کی سماعت کی۔ سماعت کے دوران مدعی کے وکیل نے موقف اختیار کیا کہ پنجاب پولیس نے ان کے موکل کے خلاف کاپی رائٹ آرڈیننس کی خلاف ورزی پر مختلف تھانوں میں 5 ایف آئی آر درج کی ہیں۔ ایک ہی الزام میں 5 ایف آئی آر درج کرنا خلاف قانون ہے۔ عدالت دیگر مقدمات خارج کر کے ایک ایف آئی آر کے تحت ٹرائل کرنے کا حکم دے۔

عدالت نے درخواست گزار کا موقف سننے کے بعد ڈی پی او سیالکوٹ سے 19 مارچ کو جواب طلب کر لیا ، عدالت نے حکم دیا کہ عدالت کو آگاہ کیا جائے کہ ایک ہی جرم کے الزام میں شہری پر 5 مقدمات کس قانون کے تحت درج کیے گئے۔

 

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔