کتے مریکل ملی کی 49 کلوننگ کاپیاں تیار

عبدالوارث ساجد  اتوار 17 مارچ 2019
شکل و صورت اور جسامت میں ایک جیسے دکھائی دینے والے یہ کلون کتے مریکل ملی، کی کاربن کاپی لگتے ہیں۔ فوٹو: فائل

شکل و صورت اور جسامت میں ایک جیسے دکھائی دینے والے یہ کلون کتے مریکل ملی، کی کاربن کاپی لگتے ہیں۔ فوٹو: فائل

دنیا میں سب سے زیادہ کلوننگ شدہ کتے مریکل ملی کو 49 کلون کاپی بننے پر گنیز بک آف ورلڈ ریکارڈ میں شامل کر لیا گیا۔

جنوبی کوریا کے متنازعہ تحقیقی ادارہ سوا آم بائیولک 2006 سے کتوں کی کلوننگ کر رہا ہے، تاہم گذشتہ برس اگست سے اس ادارے نے مخصوص نسل کے چھے سالہ کتے مریکل ملی، کی کلوننگ کرکے اس جیسے49 کلون کتے بنا لیے ہیں۔

شکل و صورت اور جسامت میں ایک جیسے دکھائی دینے والے یہ کلون کتے مریکل ملی، کی کاربن کاپی لگتے ہیں۔ ابتدا میں مریکل ملی کی 10 کلون کاپی کا ارادہ تھا، تاہم یہ تعداد بڑھتے بڑھتے 49 تک جا پہنچی ہے۔ تاہم سائنس دانوں نے اس عمل کو فطرت کے لیے خطرناک قرار دیا ہے اور مکمل معلومات جامع کیس ہسٹری اور محفوظ ترین احتیاطی اقدامات کے بغیر کلوننگ کو کرۂ ارض اور نسل انسانی کے لیے تباہ کن عمل کہا ہے۔ سائنس دانوں نے تنبیہہ کی ہے کہ کلوننگ کا عمل نہایت ضرورت پڑنے پر اور ایک خاص تعداد تک کیا جاتا تو محفوظ ہوسکتا ہے۔

لیکن اس ٹیکنالوجی کا بے تحاشا اور بے دریغ استعمال نقصان دہ ثابت ہوگا۔ نظام فطرت کو اپنے ہاتھ میں لینا عقل مندی نہیں۔ واضح رہے کہ 1996میں سب سے پہلے کلون ٹیکنالوجی کا تجربہ کیا گیا تھا، جس میں ایک بھیڑ کی کلوننگ کی گئی تھی اور کلون شدہ بھیڑ کو ڈولی کا نام دیا گیا تھا۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔