انسداد منی لانڈرنگ و ٹیررفنانسنگ رپورٹ FATF کو جمع

ارشاد انصاری  منگل 16 اپريل 2019
عالمی ادارے کے 12 نکات پر عملدرآمدکیلیے  وفاق اور صوبوں میں رابطے بڑھانے کا فیصلہ۔ فوٹو: فائل

عالمی ادارے کے 12 نکات پر عملدرآمدکیلیے  وفاق اور صوبوں میں رابطے بڑھانے کا فیصلہ۔ فوٹو: فائل

 اسلام آباد:  پاکستان نے فنانشل ایکشن ٹاسک فورس کے ایکشن پلان پر عملدرآمد کے بارے میں کمپلائنس رپورٹ فنانشل ایکشن ٹاسک فورس کوجمع کروا دی ہے۔

پاکستان نے فنانشل ایکشن ٹاسک فورس کے 12 نکات پر عملدرآمد کیلیے وفاق و صوبوں کے درمیان رابطوں کو بڑھانے اور منی لانڈرنگ و ٹیرر فنانسنگ سے نمٹنے کی صلاحیتیں بڑھانے کا فیصلہ کیا ہے اور فنانشل ایکشن ٹاسک فورس کے ایکشن پلان پر عملدرآمد کے بارے میں کمپلائنس رپورٹ فنانشل ایکشن ٹاسک فورس کوجمع کروا دی ہے۔

اس رپورٹ کا پندرہ مئی کو پیرس میں ہونیوالے ایف اے ٹی ایف کے اجلاس میں جائزہ لے کر پاکستان کا نام گرے لسٹ سے نکالنے یا گرے لسٹ میں برقرار رکھے جانے کا فیصلہ کیا جائے گا۔ فیٹف کو بھجوائی جانیوالی رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ کالعدم تنظیموں کے خلاف کاروائی کا عمل جاری ہے۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔