وسیم اکرم سے منسوب جھوٹے اشتہار پر شنیرا اکرم کا خاتون کو کرارا جواب

ویب ڈیسک  جمعرات 18 اپريل 2019
میرے لیے یہ ایک صدمہ ہے کہ کس طرح سے ایک شخص کے قدرتی چہرے پر بات کی گئی ہے، شنیرا اکرم (فوٹو: فائل)

میرے لیے یہ ایک صدمہ ہے کہ کس طرح سے ایک شخص کے قدرتی چہرے پر بات کی گئی ہے، شنیرا اکرم (فوٹو: فائل)

 لاہور: سابق پاکستانی فاسٹ بالر وسیم اکرم سے منسوب من گھڑت اشتہار پر اُن کی اہلیہ شنیرا اکرم میدان میں آگئیں بھرپور دفاع کرتے ہوئے شدید تنقید بھی کی۔

ڈاکٹر مدیحہ راؤ نامی ایک خاتون نے اپنے انسٹا گرام اکاؤنٹ پر وسیم اکرم کی ایک تصویر پوسٹ کی جس میں بوٹوکس کروانے کا دعویٰ کیا گیا اور یہ بھی کہا کہ  اگر وسیم اکرم کسی اور جگہ کے بجائے ہم سے بوٹوکس کرواتے تو کوئی بھی پہچان نہیں پاتا۔ اس طرح مقبول ترین کرکٹر سے متعلق کہنا وسیم اکرم کی اہلیہ کو پسند نہ آیا اور انہوں نے خاتون کو آڑے ہاتھوں لے لیا۔

View this post on Instagram

What gutter advertising, the absolute worst way to promote your business is by trashing other people or putting other people down in order to promote yourself. Your opinion couldn’t be more wrong as Wasim is so against injectables of any kind and has never done anything to his face and obviously does not need too, so in this shocking attempt to identify someone who has had work done you have put down someone with a natural face. Well done!! For a person in this field who manipulates peoples faces for a living I suggest you find someone else to be your pin cousin. What a desperate, trashy and unprofessional way market your business. People should really think twice before going to see you for an aesthetic opinion, I certainly would! Fillers and Botox is something you should never take lightly so I suggest you promote your page in a positive healthy way for people who really need assistance not by doing it this way. Pathetic and I think a personal apology to my husband is very necessary

A post shared by Shaniera Akram (@iamshaniera) on

شنیرا اکرم نے ردعمل میں برہمی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ تشہیر کا یہ کیا بیہودہ طریقہ ہے، خود کو یا کاروبار بڑھانے کے لیے دوسروں کی تحقیر اور تذلیل کا یہ بدترین انداز ہے، وسیم اس قسم کے ٹیکوں کے ہمیشہ ہی خلاف رہے ہیں نہ انہوں نے یہ عمل کرایا اور نہ ہی کبھی کرائیں گے۔

شنیرا کا کہنا تھا کہ میرے لیے یہ ایک صدمہ ہے کہ کس طرح سے ایک شخص کے قدرتی چہرے پر بات کی گئی ہے، اگر کمانے کے لیے دوسروں کے چہروں کو نشانہ بنانا ہی ہے تو میں کہوں گی کہ اپنی کسی کزن کا چہرہ استعمال کریں۔

شنیر اکرم نے یہ بھی کہا کہ یہ مارکیٹنگ کا ایک بھونڈا، غیرپیشہ ورانہ اور برا عمل ہے، میرا مشورہ ہے کہ اپنا کاروبار بڑھانے کے لیے صحت مندانہ طریقے استعمال کیے جائیں، میں سمجھتی ہوں کے اس کے بعد لازمی ہے کہ آپ میرے شوہر سے معذرت کریں۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔