مشرف والدہ کو دھمکی دیتے تھے، آصفہ بھٹو کا ٹوئٹر پر رد عمل

آئی این پی  بدھ 21 اگست 2013
کیس کی سماعت کے دوران آصفہ بھٹوزرداری وقتاً فوقتاً کیس کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کرتی رہی ہیں۔ فوٹو : فائل

کیس کی سماعت کے دوران آصفہ بھٹوزرداری وقتاً فوقتاً کیس کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کرتی رہی ہیں۔ فوٹو : فائل

دبئی / اسلام آ باد:  بے نظیر بھٹوکی بیٹی آصفہ زرداری نے کہاہے کہ سابق صدرپرویزمشرف نے میری والدہ کوکہا تھا کہ آپ کی سیکیورٹی کا انحصار میرے ساتھ بہترتعلقات سے مشروط ہوگا۔

منگل کومشرف پر بینظیر قتل کیس میں فردجرم عائدہونے پر سماجی ویب سائٹ ٹوئٹرپراپنے پیغام میں انھوں کہاکہ میری والدہ بے نظیر بھٹو نے جمہوریت کی روایات برقراررکھتے ہوئے ایک آمرسے کسی بھی قسم کاکوئی بھی غیرجمہوری تعلق پروان نہیں چڑھایا ۔ اس سے قبل کیس کی سماعت کے دوران آصفہ بھٹوزرداری وقتاً فوقتاً کیس کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کرتی رہی ہیں،جیسے ہی مشرف پربینظیربھٹو قتل کیس میں فردجرم عائد کی گئی توانھوں نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ پریہ بات اپنے پیغام میں لکھی’’مشرف چارجڈاوور بھٹو کیس‘‘۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔