الیکشن کمیشن نے ضمنی انتخابات کے نتائج کا اعلان کردیا

ویب ڈیسک  جمعـء 23 اگست 2013
 بلوچستان کے حلقہ پی بی  32 جھل مگسی میں سب سے زیادہ ٹرن آؤٹ 70 فیصد رہا۔ الیکشن کمیشن.  فوٹو: فائل

بلوچستان کے حلقہ پی بی 32 جھل مگسی میں سب سے زیادہ ٹرن آؤٹ 70 فیصد رہا۔ الیکشن کمیشن. فوٹو: فائل

الیکشن کمیشن آف پاکستان نے قومی و صوبائی اسمبلیوں کی 38 نشستوں پر ضمنی انتخابات کے نتائج کا اعلان کردیا۔

الیکشن کمیشن کی ویب سائٹ پر جاری نتائج کے مطابق مسلم لیگ (ن) نے قومی اسمبلی کی 5 ، پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمنٹرینز نے 3 ، تحریک انصاف نے 2 جبکہ عوامی نیشنل پارٹی اور متحدہ قومی موومنٹ نے ایک، ایک نشست حاصل کی، الیکشن کمیشن کے مطابق کراچی سے قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 254 میں سب سے کم ٹرن آؤٹ 17 فیصد جبکہ بلوچستان کے حلقہ پی بی  32 جھل مگسی میں سب سے زیادہ ٹرن آؤٹ 70 فیصد رہا۔

قومی اسمبلی:

قومی اسمبلی کے حلقہ این اے ون پشاور سے اے این پی کے غلام احمد بلور 34،386  ووٹ لے کر کامیاب جبکہ تحریک انصاف کے امیدوار بادشاہ خان دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 5 اور این اے 27 میں خواتین کو ووٹ ڈالنے سے روکنے کی اطلاعات سامنے آنے پر چیف جسٹس پشاور ہائی کورٹ نے قومی اسمبلی کے دونوں حلقوں کے نتائج روکنے کا حکم دے دیا جبکہ این اے 25 ڈی آئی خان اور ٹانک میں سیکیورٹی خدشات کے پیش نظر  ضمنی انتخابات  ملتوی کر دیئے گئے۔

این اے 13 صوابی 2 سے پاکستان تحریک انصاف کے عاقب اللہ 43333 ووٹ لے کر کامیاب جبکہ جے یو آئی فضل الرحمان گروپ کے امیدوار مولانا عطا الحق درویش  دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 48 اسلام آباد سے تحریک انصاف کے امیدوار اسد عمر 48073 لے کر کامیاب جبکہ مسلم لیگ (ن) کے اشرف گجر کر دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 68 سرگودھا سے پاکستان مسلم لیگ (ن) کے سردار محمد شفقت حیات خان 67888 ووٹ لے کر کامیاب جبکہ آزاد امیدوار جاوید حسنین شاہ دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے  71 میانوالی سے مسلم لیگ (ن) کےعبیدالله شادی خیل 95210 ووٹ لے کر عمران خان کی طرف سے خالی کی گئی نشست پر کامیاب جبکہ تحریک انصاف کےملک وحید دوسرے نمبر  پر رہے۔

این اے 83 فیصل آباد 9 سے مسلم لیگ (ن) کے میاں عبدالمنان 47107 ووٹ لے کر کامیاب جبکہ پی ٹی آئی کے فیض اللہ دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 103 حافظ آباد سے مسلم لیگ (ن) کےمیاں شاہد حسین خان بھٹی 78113 ووٹ لے کر کامیاب جبکہ تحریک انصاف کے  چوہدری شوکت علی بھٹی دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 129 لاہور میں وزیر اعلیٰ پنجاب شہباز شریف کی خالی کی گئی نشست پر مسلم لیگ (ن) کی امیدوار شازیہ مبشر 44894 لے کر کامیاب جبکہ پی ٹی آئی کے منشا سندھو دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 177 مظفر گڑھ سے پیپلز پارٹی پارلیمنٹرینز کے امیدوار غلام نور ربانی کھر نے جمشید دستی کی خالی کی ہوئی سیٹ 69903 ووٹ لے کر جیت لی جبکہ آزاد امید وار جاوید دستی دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 235 سانگھڑ 2 سے پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمنٹرینز کی امیدوار شازیہ مری 66166 ووٹ لے کر کامیاب ہوئی۔

این اے 237 ٹھٹھ سے پیپلز پارٹی پارلیمنٹرینز کی شمس النسا ناز 84819 ووٹ لے کر کامیاب جبکہ مسلم لیگ (ن) کے سید ریاض حسین شاہ شیرازی دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 254 کراچی سے ایم کیو ایم کے محمد علی راشد 53045 ووٹ لے کر کامیاب رہے۔

این اے 262 کے حتمی نتائج کا اعلان نہیں کیا گیا۔

پنجاب اسمبلی:

پنجاب اسمبلی کے حلقہ پی پی 6 راولپنڈی سے مسلم لیگ (ن) کے امید وارچوہدری سرفرار افضل 30588 ووٹ لے کر کامیاب رہے۔

پی پی 51 فیصل آباد سے مسلم لیگ (ن) کے امیدوار آزاد علی تبسم 39676 ووٹ لے کر کامیاب رہے۔

پی پی 118 منڈی بہاؤالدین سے مسلم لیگ (ن) کےچوہدری اختر عباس بوسال 31572 ووٹ لے کر کامیاب رہے۔

پی پی 123 سیالکوٹ 3 سے مسلم لیگ (ن) کے خواجہ محمد منشا  اللہ بٹ 21963 ووٹ لے کر کامیاب  رہے۔

پی پی 142 لاہور 6 سے مسلم لیگ (ن) کے خواجہ سلمان رفیق 17369 ووٹ لے کر کامیاب رہے۔

پی پی 150 لاہور سے مسلم لیگ (ن) کے امیدوار میاں مرغوب احمد 18870 ووٹ لے کر کامیاب رہے۔

پی پی 161 لاہور 25 سے چوہدری گلزار احمد گجر  27788 ووٹ لے کر کامیاب رہے۔

پی پی 193 اوکاڑہ 9 سے پیپلز پارٹی کے میا ں خرم جہانگیر وٹو 35065 لے کر کامیاب رہے۔

پی پی 210 لودھراں سے مسلم لیگ (ن) کے محمد زبیر خان 36788 ووٹ لے کر کامیاب رہے۔

پی پی217 خانیوال سے مسلم لیگ (ن) کے امیدوار رانا بابر حسین 49402 ووٹ لے کر کامیاب رہے۔

پی پی 243 ڈیرہ غازی خان 4 سے پی ٹی آئی کےاحمد علی خان درشیک 23099 ووٹ لے کر کامیاب رہے۔

پی پی 247 راجن پور سے پاکستان تحریک انصاف کے سردار علی رضا دریشک 46239 ووٹ لے کر کامیاب رہے۔

پی پی 254  مظفر گڑھ سے مسلم لیگ (ن) کے حماد نواز خان 23182 ووٹ لے کر کامیاب رہے۔

پی پی 289 سے مسلم لیگ (ن) کے امیدوار رئیس محمد محبوب احمد 30687 ووٹ لے کر کامیاب رہے۔

پی پی 292 رحیم یار خان سے پیپلز پارٹی کے امیدوار مخدوم سید علی اکبر محمود 41874 ووٹ لے کر کامیاب رپے۔

بلوچستان اسمبلی:

بلوچستان اسمبلی کے حلقے پی بی 29 نصیر آباد سے مسلم لیگ (ن) کے امیدوار حاجی محمد خان لہڑی 19512 ووٹ لے کر کامیاب رہے۔

بلوچستان اسمبلی کے حلقے پی بی 32 جھل مگسی سے آزاد امیدوارنوابزادہ طارق مگسی 26242 ووٹ کامیاب رہے۔

پی بی 44 لسبیلہ 1 سے پاکستان مسلم لیگ (ن) کے پرنس احمد علی 28180 ووٹ لے کر کامیاب رہے۔

سندھ اسمبلی:

پی ایس 12 شکار پور 2 سے پیپلز پارٹی کے عابد حسین بھائیو 34719 ووٹ لے کر کامیاب رہے۔

پی ایس 64 میر پور خاص سے ایم کیو ایم کے ڈاکٹر ظفر احمد خان کمالی 29969 ووٹ لے کر کامیاب رہے۔

پی ایس 95 کراچی سے ایم کیو ایم کے محمد حسین خان 43303 ووٹ لے کر کامیاب رہے۔

پی ایس 103 کراچی  سے متحدہ قومی موومنٹ کے رؤف صدیقی 24084 ووٹ لے کر کامیاب رہے۔

خیبر پختونخوااسمبلی:

مردان پی کے 23 مردان 1 سے اے این پی کے احمد خان بہادر 13606 ووٹ لے کر کامیاب رہے۔

پی کے 27 مردان 5 سے آزاد امیدوار جمشید خان 36699 ووٹ لے کر کامیاب رہے۔

پی کے 42 ہنگو 1 سے آزاد امیدوار شاہ فیصل خان 38391 ووٹ لے کر  کامیاب رہے۔

پی کے 70 بنوں سے جمعیت علمائے اسلام (ف) کے اعظم خان درانی 24291 ووٹ لے کر کامیاب رہے۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔