لاہور میں اسپتال سے اغوا نومولود 40 گھنٹے میں بازیاب، میاں بیوی گرفتار

ویب ڈیسک  اتوار 19 مئ 2019
اولاد نہ ہونے کے باعث بچے کو اغواء کیا، اغواء کار خاتون۔ فوٹو: ایکسپریس

اولاد نہ ہونے کے باعث بچے کو اغواء کیا، اغواء کار خاتون۔ فوٹو: ایکسپریس

 لاہور: سی آئی اے کوتوالی پولیس نے لیڈی ولنگٹن اسپتال سے اغوا ہونے والے نومولود کو 40 گھنٹے میں بازیاب کروا کے اغوا کاروں کو گرفتار کرلیا۔

ٹبی سٹی کے علاقہ لیڈی ولنگٹن اسپتال سے دو روز قبل عرفان نامی شخص کا نومولود بچہ اغوا ہوگیا تھا۔ سی سی ٹی وی فوٹیج میں انکشاف ہوا کہ بچے کو ایک عورت چادر میں چھپا کر اسپتال سے نکلی۔ مقدمہ درج ہونے کے بعد ایس پی سی آئی اے عثمان اعجاز باجوہ نے بچے کی بازیابی کے لیے ڈی ایس پی سی آئی اے کوتوالی عثمان حیدر گجر کو ٹاسک سونپا جنہوں نے 40 گھنٹے میں بچے کو بازیاب کروا کر اغوا کار میاں بیوی کو گرفتار کرلیا۔

بازیابی کے بعد بچہ اپنے ماں باپ اور رشتہ دار کے پاس موجود ہے

ڈی ایس پی سی آئی اے عثمان حیدر گجر کے مطابق ابتدائی تفتیش میں خاتون نے انکشاف کیا کہ اس کے گھر اولاد نہیں تھی جس کی وجہ سے اس نے اپنے خاوند کے ساتھ مل کر یہ واردات کی۔ سی آئی اے پولیس نے نومولود بچہ اس کے والدین کے سپرد کردیا تاہم ملزمان سے مزید تفتیش جاری ہے۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔