عمران فاروق قتل کیس کا ٹرائل روک دیا گیا

ویب ڈیسک  بدھ 19 جون 2019
عدالت نے عمران فاروق قتل کیس کا ٹرائل روکتے ہوئے فریقین کونوٹس جاری کردیا فوٹو: فائل

عدالت نے عمران فاروق قتل کیس کا ٹرائل روکتے ہوئے فریقین کونوٹس جاری کردیا فوٹو: فائل

 اسلام آباد: انسداد دہشت گردی کی عدالت میں عمران فاروق قتل کیس کی عدالتی کارروائی پر حکم امتناعی جاری کردیا گیا۔

ایکسپریس نیوزکے مطابق چیف جسٹس اطہر من اللہ اورجسٹس میاں گل حسن اورنگزیب پر مشتمل اسلام آباد ہائی کورٹ کے دو رکنی بنچ نے ڈاکٹرعمران فاروق قتل کیس میں حکم امتناعی جاری کرنے کی درخواست کی سماعت کی۔

اٹارنی جنرل انورمنصورذاتی حیثیت میں جب کہ ایف آئی اے کے اسپیشل پبلک پراسیکیوٹرخواجہ امتیازاوربرطانوی ہائی کمیشن کے نمائندے بھی عدالت پیش ہوئے۔ اٹارنی جنرل نے کہا کہ ایف آئی اے نے ٹرائل کورٹ سے برطانیہ میں شواہد اکٹھے کرنے کے لیے دوماہ کا وقت مانگا تھا لیکن ٹرائل کورٹ نے درخواست مسترد کردی۔

درخواست گزارکی جانب سے کہا گیا کہ انسداد دہشتگردی عدالت نے ایف آئی اے کی درخواست 30 مئی کو مسترد کی تھی، 30 مئی کا ٹرائل کورٹ کا فیصلہ کالعدم قراردیا جائے، انسداد دہشتگردی عدالت نے ایف آئی اے سے 20 جون کو حتمی دلائل بھی طلب کررکھے ہیں۔

اسلام آباد ہائیکورٹ نے انسداد دہشت گردی عدالت میں عمران فاروق قتل کیس کا ٹرائل روکتے ہوئے حکم امتناعی جاری کردیا اور فریقین کو نوٹس جاری کردیا۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔