ججز ریفرنس کی سماعت پر سپریم کورٹ میں وکلاء کا احتجاج

ویب ڈیسک  جمعـء 12 جولائ 2019
پاکستان بار کونسل کی جانب سے ملک گیر ہڑتال احتجاج کا اعلان کیا گیا ہے فوٹو:فائل

پاکستان بار کونسل کی جانب سے ملک گیر ہڑتال احتجاج کا اعلان کیا گیا ہے فوٹو:فائل

 اسلام آباد: سپریم کورٹ میں ججز کے خلاف صدارتی ریفرنس پر سپریم جوڈیشل کونسل کا اجلاس جاری ہے جب کہ اس موقع پر وکلا کی جانب سے احتجاج بھی کیا جارہا ہے۔

ججز کے خلاف صدارتی ریفرنسز پر سپریم جوڈیشل کونسل کا اجلاس جاری ہے جس میں کونسل ریفرنسز کا جائزہ لے رہی ہے، اس موقع پر سپریم کورٹ کے احاطے میں وکلاء کی جانب سے احتجاج کیا جارہا ہے اور وکلاء کی جانب سے احتجاجی بینرز بھی آویزاں کیے گئے ہیں۔

جسٹس قاضی فائز عیسیٰ کے خلاف ریفرنس پر بلوچستان بار کونسل، بلوچستان ہائیکورٹ بار ایسوسی ایشن و دیگر وکلاء تنظیموں کا عدالتی بائیکاٹ جاری ہے اور آج یوم سیاہ منانے کا اعلان کیا گیا ہے جب کہ پاکستان بار کونسل نے بھی صدارتی ریفرنسز پر ملک گیر ہڑتال کی کال دیتے ہوئے آج احتجاج کا اعلان کر رکھا ہے۔

واضح رہے کہ سپریم کورٹ کے جج جسٹس فائز عیسیٰ پر اہلیہ اور بیٹے کی بیرون ملک جائیداد چھپانے کا الزام ہے جس پر حکومت کی جانب سے سپریم جوڈیشل کونسل میں ججز کے خلاف ریفرنس دائر کیا گیا ہے۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔