ٹیکس معاملہ؛ ایف بی آر نے تاجروں کو مذاکرات کے لیے اسلام آباد بلالیا

ویب ڈیسک  منگل 16 جولائ 2019
ایک دن کی ہڑتال سے ملکی معیشت کو 25 ارب روپے کا نقصان ہوا، پاکستان ٹریڈرز الائنس 
 فوٹو: فائل

ایک دن کی ہڑتال سے ملکی معیشت کو 25 ارب روپے کا نقصان ہوا، پاکستان ٹریڈرز الائنس فوٹو: فائل

 اسلام آباد: ایف بی آر نے ٹیکس معاملے پر تاجروں کو مذاکرات کے لیے اسلام آباد بلالیا ہے۔

ٹیکس معاملات پر تعطل ختم کرنے کے لیے حکومت اور تاجروں کے درمیان برف پگھلنے لگی ہے جس کے بعد ایف بی آر نے لاہور، فیصل آباد اور کراچی کے تاجروں کو مذاکرات کے لئے اسلام آباد بلا لیا۔

پیٹرن ان چیف آپٹما گوہر اعجاز کا کہنا ہے تاجروں کی ہڑتال سے صنعت کا پہیہ رک گیا، حکومت غیر یقینی صورتحال سے نکلنے کے لیے معاملات مذاکرات سے حل کرے۔

پاکستان ٹریڈرز الائنس کے صدر ناصر حمید خان کا بھی کہنا ہے کہ ایک دن کی ہڑتال سے ملکی معیشت کو 25 ارب روپے کا نقصان ہوا، حکومت  مذاکرات سے معاملات طے کرنا چاہتی ہے لیکن چند تاجر رہنماؤں نے سیاسی مقاصد کے لئے ہڑتال کی کال دی۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔