گینگ وار کے نام پر بھتہ طلب کرنے والا پولیس اہلکار گرفتار

اسٹاف رپورٹر  جمعـء 20 ستمبر 2013
پولیس نے مہم میں ڈکیت،اشتہاری ملزمان سمیت 520 جرائم پیشہ گرفتار کرکے بھاری اسلحہ برآمد کرلیا، ایس ایس پی ایسٹ  فوٹو: فائل

پولیس نے مہم میں ڈکیت،اشتہاری ملزمان سمیت 520 جرائم پیشہ گرفتار کرکے بھاری اسلحہ برآمد کرلیا، ایس ایس پی ایسٹ فوٹو: فائل

کراچی:  لیاری گینگ وار کے نام پر بھتہ طلب کرنے والا پولیس اہلکار گرفتار کر لیا گیا۔

مذکورہ پولیس اہلکار لانڈھی تھانے میں تعینات تھا اور فون پر ایک شخص سے بھتہ طلب کررہا تھا، یہ بات ایس ایس پی ایسٹ زون پیر محمد شاہ نے پریس کانفرنس میں بتائی، انھوں نے کہا کہ بہادر آباد تھانے کی حدود میں رہائشی بخت حسن نامی شخص سے ٹیلی فون پر بھتہ طلب کیا جا رہا تھا اور اس سلسلے میں اسے مسلسل ٹیلی فون کالز آرہی تھی جس پر بخت حسن نے بہادر آباد تھانے میں درخواست جمع کرائی جس پر بہادر آباد پولیس نے تفتیش کرکے لانڈھی سے محمود نامی بھتہ خور کو گرفتار کر کے بھتہ خوری کا مقدمہ درج کر لیا ہے،گرفتار بھتہ خور پولیس اہلکار ہے اورلانڈھی تھانے میں ڈاک ڈیوٹی پر مامور تھا۔

پولیس اہلکار محمود کو چالاکی سے تھانے بلوا کر گرفتار کیا گیا،گرفتار پولیس اہلکار گینگ وار کے نام پر بھتہ خوری کی کئی وارداتوں میں ملوث ہے،گرفتار پولیس اہلکار کو محکمہ پولیس نے شوکاز نوٹس جا ری کردیا گیا ہے انھوں نے بتایا کہ جرائم پیشہ عناصر کے خلاف جاری مہم کے دوران ایسٹ زون پولیس نے 64 کارروائیوں میں 20 ملزمان کو گرفتار کرکے ان کے قبضے سے43 پستول ،ایک سیون ایم ایم ،2 رپیٹر،ایک ایل ایم جی، 100عدد زونگ نیٹ ورک کی سمیں ، پولیس بیلٹ اور 10موٹر سائیکلیں برآمد کی ہیں۔

گرفتار ملزمان میں ڈکیت ملزمہ نازیہ ، اور شبیر اور نوید، گلاب خان ،وقاص جعفری ، نوشاد ، ایاز ، عامر، عرفان عباسی ، محمد ندیم ، طفیل، محمد رشید ، ذوالفقار ، نواب اور دیگر شامل ہیں، گرفتار ملزمان میں اے ٹی ایم مشین پر لوگوں کو لوٹنے والا گروہ بھی شامل ہے،مہم کے دوران 500 مفرور اور اشتہاری ملزمان بھی گرفتار کیے گئے ہیں،شہر میں جاری ٹارگٹڈ آپریشن سیاسی جماعتوں کے خلاف نہیں بلکہ جرائم پیشہ افراد کے خلاف کیا جا رہا ہے،ڈی ایس پی جونائیل جیل ممتاز علی شاہ کے قتل کی تحقیقات تین مختلف زاوایوں سے جاری ہے۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔