سینیٹ، مقبوضہ کشمیر میں بھارتی جارحیت کے خلاف قرارداد مذمت منظور

خالد محمود  ہفتہ 31 اگست 2019
 ٹیپو سلطان کی مثال دینے والے جرات کریں،غفورحیدری،صرف مظاہروں سے کشمیر کا مسئلہ حل نہیں کرسکتے،مشاہد حسین،رضاربانی
 فوٹو:فائل

 ٹیپو سلطان کی مثال دینے والے جرات کریں،غفورحیدری،صرف مظاہروں سے کشمیر کا مسئلہ حل نہیں کرسکتے،مشاہد حسین،رضاربانی فوٹو:فائل

 اسلام آباد: مقبوضہ کشمیر میں نہتے مسلمانوں پر بھارتی جارحیت اورمظالم کے خلاف سینیٹ میں قرارداد مذمت منظورجبکہ خصوصی حیثیت تبدیل کرنے کا اقدام مسترد کردیاگیا۔

اجلاس کی صدارت صادق سنجرانی نے کی۔قائد ایوان شبلی فراز نے قرارداد پیش کی،جس میں کشمیریوں سے اظہاریکجہتی کرتے ہوئے کہاگیا نریندر مودی کے اقدامات اقوام متحدہ کی قراردادوں کے منافی ہے،وہاں غیر قانونی کرفیو نافذ کیا گیا۔

قراردادمیں مطالبہ کیا گیا کہ کشمیر کا فیصلہ کشمیریوں کی مرضی اور اقوام متحدہ کی قراردادوں کے مطابق کیا جائے۔ اس عزم کا بھی اظہار کیا گیا کہ مسئلہ کشمیر اجاگر کرنے کیلئے ہر فورم کا استعمال کیا جائے۔ایوان میں بحث کے دوران عبد الغفار حیدری نے کہا بہتر ہے ٹیپو سلطان کی مثال دینے والے جرات کریں، مودی نے اپنے منشور پر عملدرآمد کیا۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔