عالمی بینک کا ناقص کارکردگی پر پنجاب حکومت کو قرض نہ دینے کا فیصلہ

کامرس رپورٹر  بدھ 18 ستمبر 2019
پنجاب حکومت کو متعدد بار کارگردگی بہتر کرنے کے لیے کہا لیکن عملدرآمد نہیں ہوا، عالمی بینک ۔ فوٹو:فائل

پنجاب حکومت کو متعدد بار کارگردگی بہتر کرنے کے لیے کہا لیکن عملدرآمد نہیں ہوا، عالمی بینک ۔ فوٹو:فائل

 لاہور: عالمی بینک نے پنجاب حکومت کی ناقص کارگردگی پر دسمبر میں 3 میگا پروگرام پر قرضہ منسوخ کرنے کا عندیہ دے دیا۔

ایکسپریس نیوز کے مطابق عالمی بینک نے پنجاب حکومت کی ناقص کارگردگی آئندہ قرض نہ دینے کا فیصلہ کیا ہے اور اس حوالے سے وفاق کو ایک مراسلہ بھی بھیجا گیا ہے جس میں پنجاب کے 3 اہم منصوبوں کے لئے قرضہ منسوخ کرنے کا عندیہ دیا گیا ہے۔

مراسلے میں وفاقی حکومت کو بتایا گیا ہے کہ دسمبر میں کروڑوں روپے مالیت کے منصوبوں پر مزید قرض دینے کا معاہدہ منسوخ کیا جاسکتا ہے، کیوں کہ پنجاب حکومت نے پروجیکٹس میں عالمی بینک کو مایوس کیا، پنجاب حکومت کو متعدد بار کارگردگی بہتر کرنے کے لیے کہا لیکن عملدرآمد نہیں ہوا۔

مراسلے میں عالمی بینک کی جانب سے فلڈ مینجمنٹ پروگرام کو ختم کرنے پر تشویش کا اظہار کیا گیا ہے، جب کہ پی ڈی ایم اے اتھارٹی کی ناقص کارگردگی پر بھی تحفظات سامنے آئے ہیں۔ عالمی بینک نے استدعا کی ہے کہ وفاق پنجاب حکومت کو دیئے گئے قرض پر آڈٹ رپورٹ بھی بنوائے جس میں خصوصی طور خریداری کے معاملات کی جانچ پڑتال کی جائے۔

دوسری جانب چیئرمین پی اینڈ ڈی نے عالمی بینک کے مراسلے پر متعلقہ حکام سے جواب طلب کرلیا ہے۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔