نظام کے ساتھ لگی دیمک کو صاف کرنے جا رہے ہیں، فردوس عاشق

ویب ڈیسک  منگل 14 جنوری 2020
ایم کیو ایم نے کابینہ سے علیحدگی اختیار کی ہے حکومت سے الگ نہیں ہوئے، فردوس عاشق: فوٹو: فائل

ایم کیو ایم نے کابینہ سے علیحدگی اختیار کی ہے حکومت سے الگ نہیں ہوئے، فردوس عاشق: فوٹو: فائل

 اسلام آباد: معاون خصوصی اطلاعات فردوس عاشق اعوان نے کہا ہے کہ حکومت پاکستان کے نظام کے ساتھ لگی دیمک کو صاف کرنے جا رہی ہے۔

کابینہ اجلاس کے بعد پریس کانفرنس کرتے ہوئے معاون خصوصی اطلاعات فردوس عاشق اعوان نے بتایا کہ اجلاس میں 16 نکاتی ایجنڈے پر غورکیا گیا اور ایجنڈے میں شامل 16 میں سے 15 نکات کی منظوری دی گئی، عوامی فلاح وبہبود کیلئے اقدامات کاجائزہ لیاگیا،  عوام کے فلاحی اقدامات کے 41 پروگرامز پر عملدرآمد ہوچکا ہے۔

اجلاس میں اتحادی جماعتوں کےتحفظات پربھی بات کی گئی، اتحادی اس حکومت کے ساتھ کندھے سے کندھا ملاکر کھڑے ہیں اور کھڑے رہیں گے، یہ ایک اتحادی حکومت ہے پاکستان اور عوام کی فلاح کے ایجنڈے پر آگے چلیں گے، ایم کیو ایم نے کابینہ سے علیحدگی اختیار کی ہے حکومت سے الگ نہیں ہوئے، منایا اس کو جاتا ہے جو روٹھا ہو جو روٹھا نا ہو اس کو منایا نہیں جاتا۔

اجلاس میں مریم نواز کا نام ای سی ایل میں ڈالنے کا معاملہ زیرغور نہیں آیا، کابینہ نے ملک کی سیاسی اور معاشی صورتحال کاجائزہ لیا، حکومت پاکستان کے نظام کے ساتھ لگی دیمک کو صاف کرنے جارہی ہے، 30 سال سے مسائل کی جانب توجہ نہیں دی گئی مختلف سرکاری اداروں میں بھرتی اورترقی کے قواعد و ضوابط کا خیال نہیں رکھا گیا، متعلقہ ادارے بجٹ لے رہے ہیں لیکن اداروں میں بھرتیاں نہیں کر رہے۔

معاون خصوصی کے مطابق مختلف وزارتوں میں 30 سال سے زیر التواء تادیبی کاروائیاں، سینارٹی اور ڈسپلنری ایکشن نہیں ہوئیں، ایک لاکھ 6 ہزار343 کیسز زیر التواء ہیں، سینارٹی کے 20 ہزار585، پروموشن کے 7 ہزار 902 کیسز زیر التواء ہیں، سرکاری محکموں میں لوگ نوکریوں کے لیے ترس رہے ہیں، ایک لاکھ 29 ہزار 301 آسامیاں خالی پڑی ہیں جن کا بجٹ مل رہا ہے مگر لوگ بھرتی نہیں کیے گئے، وزیراعظم پاکستان نے سختی سے نوٹس لیا، کابینہ کے سامنے پہلی بار بیوروکریٹس کی کوتاہیاں سامنے لائی گئیں، تمام وزارتوں کی غفلت سامنے آئی ہیں، تمام انکوائریوں کو تین ماہ میں مکمل کرکے فیصلہ کرنے کی ہدایت کردی گئی، خالی آسامیوں کو چار ماہ میں پْر کیا جائے گا۔

فردوس عاشق نے بتایا کہ  کابینہ نے موٹرویز پرمعذورافراد سےمتعلق اقدامات پراطمینان کا اظہار کیا، موسمیاتی تبدیلی سےمتعلق معلومات کیلئےایپ متعارف کرائی جائےگی، صحت کارڈکوپنجاب کےسات شہروں میں تقسیم کیا جاچکاہے، پاکستان اسٹیٹ آئل کےچیف ایگزیکٹوکےتقرر کامعاملہ موخرکیاگیا، اوورسیزپاکستانیوں کےلیےموبائل ایپ متعارف کرائی گئی ہے، موسمیاتی تغیرات سےمتعلق ایپ متعارف کرائی جائےگی، گمشدہ بچوں کی برآمدگی کےلیے’’میرابچہ‘‘ایپ متعارف کرانےکافیصلہ کیاہے، کابینہ نےاقتصادی رابطہ کمیٹی کےفیصلوں کی توثیق کی،فردوس عاشق اعوا  جمعہ کادن نادرامیں خواتین کےلیےمختص کیاگیاہے۔

معاون خصوصی کا مزید کہنا تھا کہ سعودی عرب کی جیلوں سےرہاپاکستانیوں کے اہل خانہ کیلئے ڈیٹا بیس بنایاجائیگا،  تحصیل کی سطح پراحساس پروگرام کے دفاترکھولے جارہے ہیں، کراچی، لاہور، پشاور، ملتان ائیرپورٹ کے ساتھ کیثرالمنزل عمارتوں سے متعلق این او سی کی شرط کو ختم کیا، بڑے شہروں میں کیثرالمنزلہ عمارتیں تعمیر کی جا سکیں گی۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔