بلوچستان میں پیش آنے والے سانحات پر سرد مہری شرم کی بات ہے،ایوب کھوسہ

ویب ڈیسک  بدھ 19 فروری 2020
بلوچستان کا لہو ہمیشہ فروخت کے لئے تیار رہتا ہے، ایوب کھوسو۔ فوٹو: فائل

بلوچستان کا لہو ہمیشہ فروخت کے لئے تیار رہتا ہے، ایوب کھوسو۔ فوٹو: فائل

کوئٹہ: معروف اداکار ایوب کھوسہ کا کہنا ہے کہ بلوچستان میں پیش آنے والے سانحات پر سرد مہری شرم کی بات ہے ۔

ایکسپریس ٹریبیون سے بات کرتے ہوئے اداکار ایوب کھوسہ نے  کہا کہ میرے صوبے کا لہو ہمیشہ فروخت کے لئے تیار رہتا ہے کیوں کہ کوئٹہ ایک ایسا لطیفہ ہے جو اب مضحکہ خیز نہیں ہے اور اس حوالے سے اعلیٰ حکام کوبھی سمجھنے کی ضرورت ہے، یہ شرم کی بات ہے کہ کوئٹہ میں بم دھماکوں کا سلسلہ ایک سرکس میں تبدیل ہوچکا ہے اور اب کوئی بھی بلوچستان میں ہونے والے سانحات کی پرواہ نہیں کرتا ہے۔

انہوں نے کہا کہ ان جیسے مسائل ہی ہیں جو مقامی لوگوں میں ناراضگی کا احساس پیدا کرتے ہیں، بلوچستان میں امن وامان کی صورتحال کو ریاست سنجیدگی سے نہیں لے رہی اور مزید ستم ظریفی یہ ہے کہ تعلیم اور صحت سمیت بہت سے شعبے اس وقت تباہی کا شکار ہیں، میرے خیال میں یہ انتہائی اہم وقت ہے کہ ہم اس طرح کے واقعات کا سدباب کریں یا پھر ہار مان لیں۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔