جمعہ کے اجتماعات مختصرکریں، بچے اور بزرگ مساجد نہ جائیں، اسلامی نظریاتی کونسل

ویب ڈیسک  پير 16 مارچ 2020
نماز جمعہ کے اجتماعات پر حتمی فیصلہ حکومت نے کرنا ہے، اسلامی نظریاتی کونسل۔ فوٹو:فائل

نماز جمعہ کے اجتماعات پر حتمی فیصلہ حکومت نے کرنا ہے، اسلامی نظریاتی کونسل۔ فوٹو:فائل

 اسلام آباد: اسلامی نظریاتی کونسل نے کہا ہے کہ علمائے کرام نمازجمعہ کے اجتماعات کو مختصر کریں اور بزرگ و بچے مساجد میں نہ جائیں۔

ایکسپریس نیوز کے مطابق وفاقی وزیر مذہبی امور نورالحق قادی نے نماز جمعہ اور دیگر مذہبی اجتماعات سے متعلق علمائے کرام سے مشاورت کی تھی، جس پر علما نے اپنی سفارشات وفاقی وزیر کو دے دی ہیں۔

چیئرمین اسلامی نظریاتی کونسل ڈاکٹر قبلہ ایاز کا کہنا ہے کہ کونسل نے مذہبی اجتماعات سے متعلق سفارشات تیار کر لی ہیں، جس میں کہا گیا ہے کہ ملک میں جاری مذہبی اجتماعات ملتوی کیے جائیں، فی الحال مساجد بند کرنے یا نماز جمعہ کی ادائیگی پابندی کی کوئی صورتحال نہیں،  تاہم نماز جمعہ کے اجتماع میں بیانات کے بجائے مختصر خطبہ دیا جائے، جمعہ کے اجتماعات مختصر ہوں، بچے اور بزرگ افراد مسجد نہ جائیں۔

چیئرمین کونسل قبلہ ایاز نے کہا ہے کہ اسلامی نظریاتی کونسل کی سفارشات کل وفاقی کابینہ اجلاس میں پیش کی جائیں گی، اور نماز جمعہ کے اجتماعات پر حتمی فیصلہ حکومت نے کرنا ہے، لیکن صورتحال خراب ہونے پر نماز جمعہ کے اجتماع پر پابندی عائد ہوئی تو اس پر عمل کرنا ضروری ہے۔

 

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔